الیکشن 2023ء بذریعہ الیکٹرانک ووٹنگ مشین ہی ہونگے 

الیکشن 2023ء بذریعہ الیکٹرانک ووٹنگ مشین ہی ہونگے 

  

پشاور (مانیٹرنگ ڈیسک) وفاقی وزیر برائے سائنس و ٹیکنالوجی شبلی فراز نے کہا ہے 2023ء میں انتخابات الیکٹرانک ووٹنگ مشین کے ذر یعے ہونگے، 90 دن کے اندر الیکٹرانک ووٹنگ مشین بنائی گئی،15 سیکنڈ کے اندر کسی بھی پولنگ بوتھ کا نتیجہ سامنے آئیگا۔پشاور انجینئرنگ یونیورسٹی میں تقریب سے خطاب میں شبلی فراز کا کہنا تھا ووٹنگ مشین میں انسانی عمل دخل کم سے کم رکھا گیا ہے، یہ صرف ایک مشین نہیں، وو ٹ کے سلسلے میں یہ مشین تمام ایشو کا حل ہے،اس مشین کو انٹرنیٹ کی بھی ضرورت نہیں، اس سے ووٹر بھی مطمئن رہیگا، انہوں نے کہا الیکشن کمیشن کے مطابق گنتی کے عمل میں 18 لاکھ ووٹ ضائع ہوتے ہیں، ووٹ کا ضیاع نتائج پر اثر انداز ہوتا ہے، ملک میں ہر الیکشن متنازعہ رہا ہے۔وفاقی وزیر نے طلبہ پر زور دیا کہ ہمارا مقصد صرف ڈگری کا حصول نہیں ہونا چاہئے، شاندار ماضی کیساتھ مستقبل پر بھی توجہ دینے کی ضر و رت ہے۔ روز مرہ استعمال کی اشیاء بنانے کے عمل میں آگے بڑھنے کی ضرورت ہے۔ سائنس اینڈ ٹیکنالوجی کے جدید تقاضوں سے ہم آ ہنگ ہونے کی ضرورت ہے۔

شبلی فراز

مزید :

صفحہ آخر -