ہراسگی کیس، ملزمان کی جانب سے ضمانت درخواستیں واپس لینے کی بنیاد پر خارج 

  ہراسگی کیس، ملزمان کی جانب سے ضمانت درخواستیں واپس لینے کی بنیاد پر خارج 

  

لاہور(نامہ نگار)سیشن عدالت نے مینار پاکستان میں خاتون سے بدتمیزی اور اسے ہراساں کرنے میں ملوث ملزموں کی جانب سے ضمانت کی درخواستیں واپس لینے کی بنیاد پر خارج کردیں ملزمان عبد الرحمان، مدثر حسین اور بو علی سمیت دیگر نے ضمانت کی درخواستیں دائر کررکھی تھیں،ایڈیشنل سیشن جج سعید احمد نے درخواستوں پر سماعت کی،دوران سماعت فاضل جج نے کہا کہ ابھی شناخت پریڈ مکمل نہیں ہوئی،شناخت پریڈ سے قبل بعداز گرفتاری ضمانتیں دائر نہیں ہو سکتیں،ملزمان نے غیر قانونی طور پر ضمانت کی درخواستیں دائر کی ہیں ملزمان کے  وکلاء نے ضمانت کی درخواستیں واپس لینے کی استدعا کی جسے عدالت نے منظورکرتے ہوئے مذکورہ بالاحکم جاری کردیا درخواستگزاروں کا موقف تھا کہ وہ 14گست کے روز مینار پاکستان کے قریب رشتہ داروں کے گھر آئے، پولیس نے جیو فینسنگ میں نمبر آنے پر گرفتار کرلیا پولیس 400افراد کی گرفتاری کا ہدف پورا کرنے کیلئے معصوم شہریوں کو گرفتاری کر رہی ہے عدالت سے استدعاہے کہ ضمانت کی درخواستیں منظور کرکے انہیں رہاکرنے کاحکم دیاجائے۔

مزید :

علاقائی -