پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس 13 ستمبر کو بلانے کا فیصلہ،صدر خطاب کریں گے 

  پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس 13 ستمبر کو بلانے کا فیصلہ،صدر خطاب کریں گے 

  

 اسلام آباد (سٹاف رپورٹر)پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس 13 ستمبر کو بلانے کا فیصلہ کرلیا گیا اس حوالے سے اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر سے وزیراعظم کے مشیر برائے پارلیمانی امور ڈاکٹر بابر اعوان نے ملاقات کی جس میں وفاقی وزیر برائے منصوبہ بندی، ترقی، اصلاحات اور خصوصی اقدامات اسد عمر اور وفاقی وزیر برائے بین صوبائی رابطہ ڈاکٹر فہمیدہ مرزا نے شرکت کی۔ملاقات میں مجلس شوریٰ پارلیمنٹ سے صدر مملکت کے خطاب، قانون سازی اور نئے پارلیمانی سال کے  کلینڈر سے متعلق  امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ بابر اعوان نے کہاکہ 13 ستمبر کو پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس بلایا جائے گا جس سے صدر مملکت ڈاکٹر علوی خطاب کریں گے، پارلیمانی سال کا آغاز صدر مملکت کے خطاب سے ہو گا۔ اسد قیصر نے کہاکہ موثر قانون سازی کے ذریعے ملک کو درپیش چیلنجزوں  پر قابو اور عوام کو درپیش مسائل کو حل کیا جا سکتا۔ انہوں نے کہاکہ چوتھے پارلیمانی سال میں زیر التواء قوانین کی منظوری اور عوامی فلاح و بہبود سے متعلق قوانین ترجیحی بنیادوں پر منظوری کیلئے پیش کیے جائیں۔ انہوں نے کہاکہ قومی اسمبلی کے تیسرے پارلیمانی سال میں عوامی فلاح و بہبود سے متعلق متعدد بلز منظور کیے گئے، بجٹ اور عوامی اہمیت  کے حامل امور پر سیر حاصل بحث کی گئی، قومی اسمبلی کی تین سالہ کارکردگی قابل ستائش ہے جس کا کریڈٹ حکومت  اور اپوزیشن کے اراکین کو جاتا ہے۔ بابر اعوان نے کہاکہ نئے پارلیمانی سال کا کلینڈر تیار کر لیا گیا ہے جسے ہاؤس بزنس ایڈوائزری کمیٹی میں منظوری کے لیے پیش کیا جائے گا۔

مشترکہ اجلاس

مزید :

صفحہ اول -