بہاولپور:الٹرا ساؤنڈ مشینیں سپلائی کرنیکا معاملہ،تحقیقاتی کمیٹی کا مفصل فیصلہ، کیس اینٹی کرپشن کو بھجوانے کی سفارش، شواہد اعلیٰ حکام کو ارسال

بہاولپور:الٹرا ساؤنڈ مشینیں سپلائی کرنیکا معاملہ،تحقیقاتی کمیٹی کا مفصل ...

  

بہاول پور(بیورورپورٹ) محکمہ ہیلتھ بہاول پور نے چند ماہ قبل سترہ الٹراسانڈ مشینوں کے ٹینڈر کال کیے تھے جس ہر میڈی کپس نامی کمپنی نے دو ماہ قبل مشینیں سپلائی کی تھیں جس پر بائیوٹک کمپنی نے سپلائی کی جانے والی مشینوں کی میک یو ایس اے کی بجائے چائینیز بارے(بقیہ نمبر49صفحہ6پر)

 انکشاف کرتے ہوئے ڈی سی کو تحریری طور پر آگاہ کیا جس پر ڈی سی کی سربراہی میں نو رکنی کمیٹی تشکیل دی گئی اور ڈی سی آفس میں ٹیکنیکل ایکسپرٹ سے مشینوں کی انسپیکشن کے بعد ثابت ہوگیا تھا کہ سپلائی کی جانے والی مشینیں چائینیز میک ہیں اور سپلائیر کمپنی میڈی کپس نے مشینوں کی میک چائینیز ہونے کا اعتراف بھی کرلیا تھا جس پر تحقیقاتی کمیٹی نے مفصل فیصلہ دیتے ہوئے ٹینڈر کو کینسل کرنے سمیت معاملے کو اینٹی کرپشن اور ایف آئی اے کو بھی بھیجنے کی سفارشات اور دیگر شواہد سیکرٹری ہیلتھ سمیت دیگر متعلقہ اداروں کو بھی ارسال کردی، سپلائر کمپنی میڈی کپس نے ہائی کورٹ بہاول پور بنچ سے رجوع کیا اور محکمہ ہیلتھ کو پارٹی بناتے ہوئے اور اصل حقائق کو چھپاتے ہوئے عدالت میں دادرسی کے لیے پٹیشن دائر کی کہ ہمارے ٹینڈر کو ڈی سی کینسل کردیا ہے جس پر عدالت نے محکمہ ہیلتھ کو طلب کیا جس پر محکمہ ہیلتھ کی جانب سے پیش ہونے والی سینئر آفیسر نے عدالت کو صرف یہ بتایا کہ مشینیں چائینیز ہیں اس لیے ایسا کیا گیا،  فریقین یعنی محکمہ ھیلتھ اور میڈی کوئیپس کی رضا مندی سے تعدالت نے  ایک مرتبہ پھر ڈی سی  صاحب کو دوبارہ معاملے  مزید چھان بین کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے کیس خارج کردیا، عدالت کے حکم پر ڈی سی نے ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر جنرل کو دوبارہ معاملے کی ہئیرنگ سونپی جس پر ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر نے چند روز قبل دونوں پارٹیوں کو طلب کیا لیکن سپلائر کمپنی میڈی کپس کی جانب سے عدم پیروی کرتے ہوئے کوئی بھی پیش نہ ہوسکا جبکہ فریق پارٹی بائیو ٹک سے کمپنی کے نمائیندوں نے  ڈپٹی کمشنر کو پیش ھوئے تھے۔۔سپلائر پارٹی میڈی کوئیپس کی جانب سے حاضر نہ ہونے پر ڈپٹی کمشنر نے دونوں پارٹیوں کو آج دوبارہ طلب کررکھا ہے۔۔یاد رہے کہ سپلائر کمپنی کی جانب سے محکمہ ہیلتھ کو جو چائینہ میک الٹراسانڈ مشین سپلائی کی گئی اسکی مارکیٹ میں قیمت ڈھائی سے تین لاکھ روپے ہے جو کہ یو ایس اے میک کا سٹکر لگا کر تقریبا آٹھ لاکھ روپے میں سپلائی کی جارہی تھی۔

ارسال 

مزید :

ملتان صفحہ آخر -