افغانستان میں خواتین کھلاڑیوں کا مستقبل کیا ہوگا ؟ دوحہ میں سیاسی دفتر کے ترجمان ڈاکٹر محمد نعیم نے کھل کر بتا دیا 

افغانستان میں خواتین کھلاڑیوں کا مستقبل کیا ہوگا ؟ دوحہ میں سیاسی دفتر کے ...
افغانستان میں خواتین کھلاڑیوں کا مستقبل کیا ہوگا ؟ دوحہ میں سیاسی دفتر کے ترجمان ڈاکٹر محمد نعیم نے کھل کر بتا دیا 
سورس: File Photo

  

  دوحہ (ڈیلی پاکستان آن لائن)افغان طالبان کے دوحہ میں سیاسی دفتر کے ترجمان ڈاکٹر محمد نعیم نے کہا ہے کہ افغانستان میں خواتین کے کھیلوں کا مستقبل طےکرنےکےلیےعلما و مشائخ کی کمیٹی قائم کی جائے گی،افغانستان میں تمام معاملات شرعی قوانین کےمطابق ہوں گے،خواتین کھلاڑی ملک میں کھیلوں کی سرگرمی جاری رکھ سکیں گی یا نہیں؟ اس حوالے سے علما و مشائخ پر مشتمل کمیٹی فیصلہ کرے گی۔

 عرب ویب سائیٹ کے ساتھ خصوصی گفتگو کرتے ہوئے ڈاکٹرمحمد نعیم نے کہا کہ جو کام اسلامی شرعی قوانین کے مخالف نہیں اس پر ہمیں کوئی اعتراض نہیں ہے، ہمارے ہاں علما مشائخ اور سکالرز اس حوالے سے غور کریں گے،جلد ہی اس کمیٹی کا اعلان کر دیا جائے گا جس میں ایسے تمام شعبوں کے جائز ہونے یا نہ ہونے کا فیصلہ کیا جائے گا۔ترجمان طالبان ڈاکٹرمحمد نعیم نےخواتین کی فٹبال ٹیم کے حوالے سےسوال پر کہا کہ افغان خواتین کے لیے ہمارا پیغام ہے کہ یہ ہمارا گھر ہے اور افغان ملت اسلامی قوانین کے مطابق اپنی زندگی گزاریں گے، ہمیں ان تمام مسائل کا ادراک ہے اور اس پر غور ضرور کیا جائے گا ،جو بھی کام شرعی قوانین کے خلاف نہیں ہوگا، اسے طالبان ہرگز نہیں روکیں گے، اس حوالے سے کمیٹی جو بھی فیصلہ کرے گی اس پر عملدرآمد کیا جائے گا۔ 

مزید :

کھیل -