سنی علماء ومشائخ ’’فکری مکالمہ‘‘ آج جامعہ نعیمیہ میں ہوگا

سنی علماء ومشائخ ’’فکری مکالمہ‘‘ آج جامعہ نعیمیہ میں ہوگا

  



لاہور(ایجوکیشن رپورٹر)نعیمین ایسو سی ایشن پاکستان کے زیر اہتمام قومی و بین الاقوامی سطح پر عالمِ اسلام کو درپیش مسائل اور خطے کی تیزی سے بدلتی ہوئی جغرافیائی صورتحال پر سنی علماء ومشائخ ’’فکری مکالمہ‘‘ آج جامعہ نعیمیہ میں منعقد ہوگا۔ جس کی صدارت ناظمِ اعلیٰ جامعہ نعیمیہ و ممبر اسلامی نظریاتی کونسل پاکستان علامہ ڈاکٹر محمد راغب حسین نعیمی کریں گے جبکہ ماہر تعلیم پروفیسر لیاقت علی رضوی ‘ مرکزی صدر نعیمین ایسو سی ایشن پروفیسر ظفر اقبال نعیمی‘ ممتاز عالمِ دین مولانا امداد اللہ نعیمی‘ ڈاکٹر محمد حسیب قادری‘ مفتی نعیم احمد صابری‘ مفتی انتخاب احمد نوری‘ پروفسیر ارشد اقبال نعیمی‘ علامہ مشتاق احمد نوری‘ پروفیسر وارث علی شاہین‘ علامہ محمد قاسم علی و دیگر علمائے کرام ‘ مشائخ عظام ‘ ادبی شخصیات اظہارِ خیال فرمائیں گے۔ اس فکری مکالمے میں نعیمین ایسو سی ایشن کے رہنما مفتی محمد ابو بکر اعوان‘ پیر شہباز احمد سیفی‘ مفتی قیصر شہزاد نعیمی‘ مولانا ارشد نعیمی‘ مفتی محمد عمران حنفی‘ مفتی مسعود الرحمن ‘ مفتی عرفان اللہ سیفی‘ مفتی ندیم قمر‘ مفتی شفقت علی یوسفی‘ پیر فاروق احمد‘ مفتی ابوبکر قریشی‘ مولانا فدا حسین القادری‘ مفتی نذر فرید القادری سمیت دیگر مرکزی و صوبائی عہدیداران شرکت کریں گے۔ مکالمے کا آغاز صبح 9 بجے ڈاکٹر سرفراز نعیمی ریسرچ انسٹیٹیوٹ میں ہوگا ۔ جس میں قاری محمد رفیق نقشبندی تلاوتِ کلامِ پاک و ہدیہء نعتِ رسولؐ مقبول پیش کریں گے۔ تقریب کے اختتام پر مشترکہ اعلامیہ جاری کیا جائے گا۔ نیز نعیمین ایسو سی ایشن پاکستان کے 2018 ء کے حوالے سے تعلیمی ‘ تبلیغی اور فلاحی سرگرمیوں کے اہداف بھی طے کیے جائیں گے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1


loading...