سپریم کورٹ کمیشن برائے صاف پانی نے سیمپلنگ مہم کا آغاز کردیا

سپریم کورٹ کمیشن برائے صاف پانی نے سیمپلنگ مہم کا آغاز کردیا

  



ملتان ( وقائع نگار) سپریم کورٹ کمیشن برائے صاف پانی نے سیمپلنگ مہم کا آغاز کر دیا ہے۔ اس سلسلے میں سپریم کورٹ کمیشن کے سربراہ ایڈوکیٹ فہد ملک نے ڈی جی فوڈ اتھارٹی کی سربراہی میں پنجاب فوڈ اتھارٹی ٹیموں کی مدد سے شہر کے مختلف علاقوں سے سیمپل لیے۔ سپریم کورٹ نے پینے کے پانی کے حوالے سے سیمپل لے کر رپورٹ مرتب کرنے کے لیے کمیشن قائم کیا تھا جس کی سربراہی ایڈوکیٹ فہد(بقیہ نمبر41صفحہ7پر )

ملک کر رہے ہیں۔کمیشن نے پنجاب فوڈاتھارٹی ٹیموں کی مدد سے واسا پانی اور منرل واٹر کے مختلف برانڈز کے سیمپل لیے۔ سیمپل کولیکشن اور تجزیے میں پنجاب فوڈ اتھارٹی سپریم کورٹ کمیشن کی خصوصی مدد کر رہی ہے۔اس حوالے سے ڈی جی فوڈ اتھارٹی نورالامین مینگل کا کہنا تھا کہ پنجاب فوڈ اتھارٹی اس سال دو دفعہ تمام شہروں کا پانی چیک کروا چکی ہے۔ 2017 میں فروری اور مئی میں شہروں کے تمام علاقوں کا پانی چیک کروایا گیا اور نتائج واسا اسمیت دیگر متعلقہ انتظامیہ سے شئیر کیے گئے تھے۔ پہلی دفعہ نتائج خراب آئے تاہم دوسری دفعہ کچھ بہتری نظر آئی۔ ڈی جی فوڈ اتھارٹی کا مزید کہنا تھا کہ اشیاء خوردونوش کے معیار کی بہتری کے لیے پنجاب فوڈ اتھارٹی تمام محکموں کے ساتھ مل کر کام کر رہی ہے۔

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...