سعودی عرب کسی این آر او کیلئے کردار ادا نہیں کرے گا،ختم نبوت ﷺ پر حملہ آور عناصر کو منظر عام پر لانے کی جدوجہد جاری رہے گی :علامہ طاہر اشرفی

سعودی عرب کسی این آر او کیلئے کردار ادا نہیں کرے گا،ختم نبوت ﷺ پر حملہ آور ...
سعودی عرب کسی این آر او کیلئے کردار ادا نہیں کرے گا،ختم نبوت ﷺ پر حملہ آور عناصر کو منظر عام پر لانے کی جدوجہد جاری رہے گی :علامہ طاہر اشرفی

  



لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)پاکستان علماء کونسل کے چیئرمین اور  وفاق المساجد پاکستان کے سربراہ علامہ حافظ طاہر محمود اشرفی نے کہا ہے کہ سعودی عرب کسی این آر او کیلئے کردار ادا نہیں کرے گا،راجہ ظفر الحق کی رپورٹ کا منظر عام پر نہ لایا جانا واضح کر رہا ہے کہ ختم نبوت ﷺسے متعلق قانون کے خاتمے کا ذمہ دار کون ہو سکتا ہے؟ حکومت میں شامل بعض عناصر غیر ملکی طاقتوں کی خوشنودی کیلئے اسلام اور پاکستان کی اساس ختم نبوت ﷺ پر حملہ آور ہیں، پاکستان کی عوام نے عقیدہ ختم نبوت ﷺ کے حوالہ سے قوانین کے خاتمے کی کوششوں کو ناکام بنا دیا ہے اور جو عناصر اس میں ملوث ہیں ان کو منظر عام پر لانے تک جدوجہد جاری رہے گی۔

لاہور میں مختلف دینی و مذہبی جماعتوں کے قائدین اور مرکزی رہنماؤں سے ملاقات کے دوران علامہ حافظ طاہر محمود اشرفی کا کہنا تھا کہ علماتحفظ ختم نبوت و ناموس رسالت ﷺ ایکشن کمیٹی کے تحت 8 جنوری کو لاہور میں علماء و مشائخ کنونشن ہو گا ،سعودی عرب کسی این آر او کیلئے کردار ادا نہیں کرے گا ، پاکستان کا امن ، استحکام اور سلامتی سعودی قیادت کو عزیز ہے۔

حافظ محمد طاہر محمودا شرفی نےعلماء و مشائخ کے سوالات کے جواب دیتے ہوئے کہا کہ سعودی عرب کو پاکستان اور اہل پاکستان عزیز ہیں, جس طرح دیگر سیاسی و مذہبی قائدین سعودی  قیادت کی دعوت پر ارض حرمین جاتے ہیں،اسی طرح میاں شہباز شریف بھی گئے ہیں،سعودی قیادت کیلئے پاکستانی عوام،پاکستان کی تمام سیاسی و مذہبی جماعتیں محترم ہیں،خادم الحرمین الشریفین شاہ سلمان بن عبد العزیز اور ان کے ولی عہد امیر محمد بن سلمان کا واضح پیغام پوری دنیا کیلئے ہے کہ سعودی عرب پاکستان اور اہل پاکستان کا احترام کرتا ہے اور پاکستان کی سلامتی اور استحکام سعودی عرب کو بہت عزیز ہے ۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ فلسطین کی حکومت کے ہندوستان سے تعلقات پرانے ہیں، فلسطینی صدر کو اتنا سخت ایکشن نہیں لینا چاہیے تھا ، القدس کی حمایت ہر مسلمان کا فرض ہے اور اسی سلسلہ میں راوالپنڈی کی ریلی میں فلسطینی سفیر شریک ہوئے ، امید کرتے ہیں کہ معاملات کی اصلاح ہو جائے گی۔ملاقات کے موقع پر  مولانا زبیر عابد ، مولانا اسلم قادری ، مولانا اسد اللہ فاروق ، مولانا محمد اشفاق پتافی ، مولانا زبیر زاہد ، مولانا قاری عبد الحکیم اطہر ، قاری شمس الحق ، قاری مبشر رحیمی ، مولانا عبد القیوم سمیت دیگر بھی موجود تھے۔ 

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور


loading...