کراچی ، پولیس کا چھاپہ ، سال نو پر دہشت گردی کا بڑا منصوبہ ناکام بنا دیا

کراچی ، پولیس کا چھاپہ ، سال نو پر دہشت گردی کا بڑا منصوبہ ناکام بنا دیا

کراچی(اسٹاف رپورٹر)شہر قائد کے علاقے پرانی سبزی منڈی سکھیا گراؤنڈ میں پولیس نے کارروائی کے دوران سال نو پر دہشت گردی کا بڑا منصوبہ ناکام بنادیاہے،پولیس نے خفیہ اطلاع پر کارروائی کرتے ہوئے بارود سے بھری ایک موٹر سائیکل برآمد کرلی ہے اور7مشتبہ افراد کو بھی گرفتار کرلیا ہے۔پولیس کارروائی کے دوران دہشت گردوں کی جانب سے پولیس پر دستی بم پھینکے گئے اور فائرنگ بھی کی گئی تاہم ملزمان فرار ہونے میں کامیاب ہوگئے۔پولیس حکام کے مطابق کراچی کے علاقے پرانی سبزی منڈی میں سکھیا گراؤنڈ میں قائم منشیات کے اڈے پر پولیس کے چھاپے کے دوران ملزمان نے پولیس پر فائرنگ کردی، پولیس ٹیم کی جوابی فائرنگ کے نتیجے میں ملزمان نے دستی بم سے حملہ کیا اور فرار ہوگئے تاہم کوئی جانی نقصان نہیں ہوا، واقعے کے بعد پولیس کی بھاری نفری نے سکھیا گراؤنڈ کے اطراف کے علاقے کو گھرے میں لے کر آپریشن شروع کردیا۔پولیس کو سرچ آپریشن کے دوران جائے وقوع سے 2 دستی بم اور ایک بارود سے بھری موٹر سائیکل ملی، موٹر سائیکل میں ریموٹ کنٹرول ڈیوائس نصب تھی جسے بم ڈسپوزل اسکواڈ کے عملے نے ناکارہ بنادیا جب کہ جائے وقوعے سے 7 مشتبہ افراد کو بھی حراست میں لیا گیا ہے جن سے تفتیش جاری ہے۔ پولیس کے مطابق برآمد کیے جانے والے دونوں بم روسی ساختہ ہیں جب کہ دہشت گردوں نے سال نو کے موقع پر دہشت گردی کا منصوبہ بنایا تھا۔ایس ایس پی ایسٹ اظفر مہیسر نے بتایا ہے کہ جائے وقوعہ سے مشکوک موٹر سائیکل بھی ملی ہے جس کی ٹینکی میں بارودی مواد نصب کیا گیا تھا جو ریموٹ سے منسلک تھا۔پولیس کے مطابق موٹرسائیکل کے مالک کا پتہ چل گیا ہے جو گزشتہ شام چار بجے چوری ہوئی تھی اور موٹر سائیکل کے مالک نے رات آٹھ بجے پی آئی بی تھانے میں رپورٹ درج کرائی تھی۔واقع کی اطلاع ملتے ہی ڈی آئی جی ایسٹ عامر فاروقی بھی جائے وقوعہ پر پہنچے اور حالات کا جائزہ لیا۔ڈی آئی جی عامر فاروقی کے مطابق بم ڈسپوزل اسکواڈ نے بم ناکارہ بنا دیا اور بارود سے بھری موٹرسائیکل کو کلیئر کر دیاہے۔ ڈی آئی جی عامر فاروقی کے مطابق اطلاع تھی کہ بارود سے بھری گاڑی تیار کی ہے جو نیو ایئر پر کہیں استعمال کی جائے گی۔تفتیشی حکام کے مطابق موٹر سائیکل کے ساتھ بوتل میں آدھا لیٹر پٹرول ڈال کر ٹنکی کے نیچے لٹکا دی تھی جب کہ ڈیٹونیٹر اور ایک دستی بم بھی موٹرسائیکل کے ساتھ لگایا گیا تھا۔تفتیشی ذرائع کے مطابق موٹر سائیکل تیار کرنے والے گروہ کا تعلق مفتی شاکر گروپ سے لگتا ہے، جو چوہدری اسلم اور انسپکٹر شفیق تنولی پر خودکش حملوں میں ملوث تھا۔ موقع سے ملنے والے شواہد سے اس گروپ کے تانے بانے جیل میں مل رہے ہیں۔ڈی آئی جی ایسٹ نے بتایا کہ پولیس نے آپریشن کرکے موٹر سائیکل برآمد کرلی ہے اور بارودی مواد ناکارہ بنایا دیا گیا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ موٹر سائیکل چوری شدہ ہے اور اس کی ٹینکی میں بم تیار کیا گیا تھا، بم میں آٹھ سے دس کلو گرام بارودی مواد اور کیلیں بھی استعمال کی گئیں ہیں۔تفتیشی حکام کے مطابق موقع سے 3 دستی بم بھی ملے تھے، جب کہ موٹر سائیکل کے ساتھ ڈیٹونیٹر اور ایک دستی بم بھی لگایا گیا تھا، موٹر سائیکل کے ساتھ بوتل میں آدھا لیٹر پیٹرول ڈال کر ٹنکی کے نیچے لٹکا دی تھی جب کہ موٹر سائیکل کی ٹنکی میں 7 کلو بارود نٹ بولٹ کے ساتھ بھرا ہوا تھا۔

مزید : کراچی صفحہ اول


loading...