ہوٹل کے گارڈ نے کراچی پولیس کے اہلکاروں کو موبائل ہٹانے کی ہدایت کردی لیکن پھر کیا ہوا؟ ویڈیو نے انٹرنیٹ پر طوفان کھڑا کردیا

ہوٹل کے گارڈ نے کراچی پولیس کے اہلکاروں کو موبائل ہٹانے کی ہدایت کردی لیکن ...
ہوٹل کے گارڈ نے کراچی پولیس کے اہلکاروں کو موبائل ہٹانے کی ہدایت کردی لیکن پھر کیا ہوا؟ ویڈیو نے انٹرنیٹ پر طوفان کھڑا کردیا

  


کراچی (ویب ڈیسک) ریسٹورنٹ کے سامنے کھڑی پولیس موبائل ہٹانے کو کیوں کہا؟ نارتھ کراچی میں پولیس اہل کاروں نے سیکیورٹی گارڈ پر تشدد کیا اور اس کا اسلحہ چھین لیا، زبردستی موبائل میں بٹھا کر ساتھ لے جانے کی کوشش بھی کی۔کراچی میں نارتھ کراچی کے علاقے میں ریسٹورنٹ کے سامنے سے پولیس موبائل کو ہٹانے کا کہنے والے سیکیورٹی گارڈ کو پولیس اہلکاروں نے تشدد کا نشانہ بنا ڈالا۔

‎کراچی پولیس ملزمان کو گرفتار کرنے کے بجائے عام شہریوں پر تشدد کرنے لگی ہے، ریسٹورنٹ سے موبائل ہٹانے کا کہنے پر پولیس نے گارڈ کو تشدد کا نشانہ بنا ڈالا۔

نارتھ کراچی الیون اے میں واقع نجی ریسٹورنٹ کے سامنے ڈی ایس پی امین الرحمان کے  سکواڈ نے موبائل لگا دی۔موبائل لگنے سے ریسٹورنٹ سے نکلنے والی فیملیز کو مشکلات کاسامنا ہوا تو سیکیورٹی گارڈ نے پولیس اہلکاروں کو ریسٹورنٹ کے سامنے سے موبائل ہٹانے کے لیے کہا جس پر اہلکاروں نے گارڈ پر تشدد کیا۔

پولیس اہلکاروں کا اس پر ہی بس نہیں چلا، انہوں نے گارڈ کا اسلحہ بھی چھین لیا اور اسے زبردستی موبائل میں بٹھانا بھی چاہا، ‎ریسٹورنٹ کی انتظامیہ کے کہنے پر گارڈ کو چھوڑا گیا۔ویڈیو دیکھئے 

مزید : علاقائی /سندھ /کراچی


loading...