چیف جسٹس کے ریمارکس نے حکومت کے غبارے سے ہوا نکال دی ہے :رانا ثناءاللہ

چیف جسٹس کے ریمارکس نے حکومت کے غبارے سے ہوا نکال دی ہے :رانا ثناءاللہ
چیف جسٹس کے ریمارکس نے حکومت کے غبارے سے ہوا نکال دی ہے :رانا ثناءاللہ

  


اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) مسلم لیگ ن کے رہنمارانا ثناءاللہ نے کہاہے کہ چیف جسٹس کے ریمارکس نے حکومت کے غبارے سے ہوا نکال دی ہے اور ابھی دو دن پہلے یہ سندھ پرحملہ آور ہوگئے تھے، وزیراعلیٰ سندھ کو مستعفی نہیں ہونا چاہئے ۔

جیونیوز کے پروگرام ”آپس کی بات “ میں گفتگو کرتے ہوئے رانا ثناءاللہ نے کہا کہ ہماری سیاست ابھی بالغ النظر ی کی سطح پر نہیں پہنچی ،اگر ایسے حالات اس ملک سے ہٹنے نہیں دیئے جائیں گے تو کیا کیا جائے گا ؟اصغر خان کیس 1996میں مقدمہ دائر ہوا اور 16سال بعد سپریم کورٹ نے کہا کہ ان کیخلاف کارروائی کی جائے اور ان بندوں نے بھی کہا کہ ہم نے پیسے دیئے تھے ۔اب ایف آئی اے نے کہاہے کہ ثبوت ہی کوئی نہیں حا لانکہ بندے خود کہہ رہے ہیں کہ ہم نے یہ کام کیاہے ۔

انہوں نے کہا کہ جس کیس میں کسی گواہ نے نوازشریف کیخلاف بیان ہی نہیں دیا ، اس کیس میں نواز شریف کو سزا ہوگئی ہے، اگر پہلے انتخابات میں مسائل تھے توکیاوہ مسائل اب بھی ہونے چاہئے ، نظام کی خرابیوں کودور ہوناچاہئے ، اگر ان خرابیوں کو دور نہیں کیا جائیگا تو پھرایسا ہی چلتارہے گا جیسا ستر سال سے چل رہاہے ۔ان کا کہنا تھا کہ وزیر اعلیٰ سندھ کو مستعفی نہیں ہوناچاہئے ، چیف جسٹس کے ریمارکس نے حکومت کے غبارے سے ہوا نکال دی ہے اور ابھی دو دن پہلے یہ سندھ پرحملہ آور ہوگئے تھے ۔

مزید : قومی


loading...