حکومت گستاخانہ خاکوں پر ہالینڈ کی پارلیمنٹ سے احتجاج کرے،علماء

حکومت گستاخانہ خاکوں پر ہالینڈ کی پارلیمنٹ سے احتجاج کرے،علماء

  



لاہور(پ ر)عالمی مجلس تحفظ ختم نبوت نے ہالینڈ میں گستاخ رسول گیرٹ وائلڈرز کاایک مرتبہ پھر گستاخانہ خاکوں کی نمائش کے اعلان کے خلاف احتجاج کرتے ہوئے حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ ہالینڈ کی پارلیمنٹ میں گستاخانہ خاکوں کی نمائش کے اعلان پر عمل درآمد روکنے کے لیے اپنا بھرپور کردار ادا کر کے امت مسلمہ کے جذبات کی ترجمانی کرے۔ہالینڈ کی اسلام دشمن سیاسی جماعت“فریڈم پارٹی”کے سربراہ ملعون 'گیرٹ ولڈرز' نے ایک بار پھر دنیا کا امن داؤ پر لگاتے ہوئے نبی پاکؐ کی شان اقدس کے خلاف خاکوں کی نمائش کا مقابلہ کروانے کا اعلان کیا جو کہ سراسر توہین رسالت ہے اور توہین سب سے بڑی دہشت گردی ہے عالمی دنیا اس دہشت گردی کو رکوانے میں اپنا کردارا ادا کرے۔علماء نے مطالبہ کیا ہے کہ گیرٹ ورلڈ کی جانب سے ہرزہ سرائی سے پوری دْنیا کا امن خطرے میں پڑچکا ہے۔ اِس لیے گیرٹ ورلڈ نامی ملعون کو اِس شیطانی کھیل سے روکا جائے ورنہ پھر کو ئی ممتاز قادری، عامر چیمہ، غازی علم دین پیدا ہو جائیں گے۔ عالمی مجلس تحفظ ختم نبوت لاہور کے امیر شیخ الحدیث مولانا مفتی محمدحسن،مرکزی ناظم نشرواشاعت مولانا عزیز الرحمن ثانی ، مبلغ ختم نبوت لاہور مولانا عبدالنعیم،پیررضوان نفیس،مولانا علیم الدین شاکر، قاری جمیل الرحمن اختر، مولانا قاری عبدالعزیز مولانا سید ضیاء الحسن شاہ،مولانا خالد عابد،مولانا قاری ظہور الحق، مولانا خالد محمود،مولانا سعید وقار،قاری محمد اقبال،مولانا ظہیراحمدقمر،مولانا مسعود احمد بہاولپوری، مولانا عبدالشکور یوسف،مولانا عبید الرحمن معاویہ،مولانا پیرزبیر جمیل و دیگر علماء نے ہالینڈ کی پارلیمنٹ میں گستاخانہ نمائش کے اعلان پر شدیداحتجاج کرتے ہوئے کہاہے کہ یہ گستاخانہ شیطانی اعلان تہذیبوں میں تصادم کی سازش ہے۔

کرانے اور دنیا کا امن تباہ کرنیکی ناپاک سازش ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1