نیشنل انویسٹمنٹ بورڈ فراڈ کیس ایف آئی اے سے جواب طلب سماعت 2جنوری تک ملتوی

نیشنل انویسٹمنٹ بورڈ فراڈ کیس ایف آئی اے سے جواب طلب سماعت 2جنوری تک ملتوی

  



کراچی(این این آئی)نیشنل انویسٹمنٹ بورڈ میں فراڈ سے متعلق کیس میں ملزمان کی درخواست ضمانت کی سماعت کے دوران سندھ ہائی کورٹ نے ایف آئی اے کو 2جنوری کو جواب جمع کرانے کی ہدایت کر دی ہے۔پیرکوسندھ ہائی کورٹ میں نیشنل انویسٹمنٹ بورڈ میں ایک ارب روپے سے زائد کے فراڈ کیس میں ملزم شارق سمیت دیگر کی درخواست ضمانت پر سماعت کی۔کیس کی سماعت کے دوران ایف آئی اے تفتیشی افسر سندھ ہائیکورٹ میں پیش ہوئے، ملزم شارق کے وکیل نے عدالت کو بتایا کہ فراڈ کیس کی مرکزی ملزمہ صدف ضمانت پر ہے جبکہ ملزم شارق کو ضمانت نہیں دی گئی۔عدالت نے ایف آئی اے کے تفتیشی افسر سے کہا کہ آئندہ سماعت پر بتایاجائے کہ متروکہ املاک سرکار کیسے حاصل کرسکتی ہے، ایف آئی اے کے تفتیشی افسر کے مطابق ملزمان نے ایک ارب 20کروڑ روپے سے زائد کا فراڈ کیا اور ملزمان کو دسمبر 2016 میں گرفتار کیا گیا تھا۔عدالت نے ایف آئی اے پراسیکیوٹر سے مزید دلائل طلب کرتے ہوئے سماعت 2 جنوری تک ملتوی کردی۔

جواب طلب

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر