عمران خان نے ایک اور بڑے اعلیٰ افسر کو عہدے سے ہٹانے کا فیصلہ کر لیا

عمران خان نے ایک اور بڑے اعلیٰ افسر کو عہدے سے ہٹانے کا فیصلہ کر لیا
عمران خان نے ایک اور بڑے اعلیٰ افسر کو عہدے سے ہٹانے کا فیصلہ کر لیا

  



اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن )وفاقی حکومت نے آئی جی کے پی کے کو فوری تبدیل کرنے کا فیصلہ کر لیاہے اور آئی جی ڈاکٹر نعیم کو او ایس ڈی بنائے جانے کا امکا ن ہے ،  جبکہ نئے آئی جی تعیناتی کیلئے اسٹبلشمنٹ ڈویژن نے تین نام وزیراعظم آفس کو بھیجوا دیئے ہیں ۔

نجی ٹی وی جیونیوز کے مطابق اسٹبلشمنٹ ڈویژن نے نئے آئی جی خیبر پختونخوا کیلئے تین نام وزیراعظم آفس کو بھجوا دیئے ہیں جن میں سینئر پولیس افسران محمد طاہر ، ثناءاللہ عباسی اور محمد سلیمان شامل ہیں ۔ ایک نام کی منظوری کے بعد سمری اسٹبلشمنٹ ڈویژن کو واپس بھجوائی جائے گی، وزیراعظم کی منظوری کے بعد اسٹبلشمنٹ ڈویژن نئے آئی جی کی تعیناتی کا نوٹیفکیشن جاری کرے گا ۔نجی ٹی وی کا ذرائع کے حوالے سے کہنا ہے کہ آئی جی کے پی کے ڈاکٹر نعیم کو ہٹا کر او ایس ڈی بنائے جانے کا امکان ہے ۔

یہاں یہ امر بھی قابل ذکر ہے کہ  وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت وفاقی کابین کا ہفتہ وار اجلاس آج ہوگا جس میں ملکی سیاسی اور معاشی صورتحال کا جائزہ لیا جائے گا۔اجلاس کا ایجنڈا آٹھ نکات پر مشتمل ہے اور نئے نیب آرڈیننس سے متعلق بھی بات چیت ہوگی۔ کابینہ ای سی سی کے فیصلوں اور کمیٹی برائے لیجسلیٹو کیسز کی توثیق کا بھی امکان ہے۔نیشنل کالج فار آرٹ انسٹیٹیوٹ کا ڈرافٹ بل اورسٹیٹ بینک کی سالانہ پبلیکیشن جاری کرنے کی منظوری متوقع ہے۔سمال اینڈ میڈیم انٹر پرائزز ڈویلپمنٹ اتھارٹی(سمیڈا) کے چیف ایگزیکٹو آفیسر کی تقرری کی منظوری بھی کابینہ اجلاس کے ایجنڈے میں شامل ہے۔

مزید : اہم خبریں /قومی