پی آئی اے کے سربراہ کو کام کرنے سے روک دیا گیا

پی آئی اے کے سربراہ کو کام کرنے سے روک دیا گیا
پی آئی اے کے سربراہ کو کام کرنے سے روک دیا گیا

  



کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن) سندھ ہائیکورٹ نے پی آئی اے کے سربراہ ایئر مارشل ارشد  محمود ملک کو کام سے روک دیا۔

سندھ ہائیکورٹ میں پی آئی اے کے سی ای او ایئر مارشل ارشد ملک کی تعیناتی کے خلاف درخواست کی سماعت ہوئی۔ عدالت نے ایئر مارشل ارشد ملک کو کام کرنے سے روک دیا۔ عدالت نے پی آئی اے میں نئی بھرتیوں، پرانے ملازمین کو نکالنے اور تبادلوں سے بھی روک دیا۔ عدالت نے حکم دیا کہ پی آئی اے میں خرید و فروخت ، پالیسی سازی اور ایک کروڑ سے زائد کے اثاثے بھی فروخت نہیں کرسکتے ۔

 ارشد ملک کے خلاف ساسا کے جنرل سیکرٹری صفدر انجم نے عدالت سے رجوع کیا تھا۔ انہوں نے اپنی درخواست میں موقف اپنایا تھا کہ ایئر مارشل ارشد ملک تعلیمی معیار پر پورا نہیں اترتے ، ان کا کا ایئر لائن سے متعلق کوئی تجربہ نہیں ہے ، اس لیے انہیں کام سے روکا جائے۔

مزید : Breaking News /قومی