سعودی وزیر خارجہ پاکستان کب آئیں گے ؟ اہم خبر آگئی

سعودی وزیر خارجہ پاکستان کب آئیں گے ؟ اہم خبر آگئی
سعودی وزیر خارجہ پاکستان کب آئیں گے ؟ اہم خبر آگئی

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

 ریاض (ڈیلی پاکستان آن لائن)سعودی وزیر خارجہ شہزادہ فیصل بن فرحان وفد کے ہمراہ  جنوری 2021 میں پاکستان کا دورہ کریں گے جس کی سفارتی ذرائع نے تصدیق کردی ہے،غالب امکان ہے کہ 2021 میں پاکستان کا دورہ کرنے والی وہ پہلی غیر ملکی شخصیت ہوں گے۔

عرب خبر رساں ادارے "اردو نیوز " کے مطابق سفارتی ذرائع  نے تصدیق کی ہے کہ سعودی وزیر خارجہ جنوری دو ہزار اکیس میں اپنے وفد کے ہمراہ پاکستان کا دورہ کریں گے ۔سعودی وزیر خارجہ کے دورہ پاکستان کے حوالے سے ترجمان دفتر خارجہ زاہد حفیظ چوہدری نے "اردو نیوز" کو بتایا کہ پاکستان اور سعودی عرب کے تعلقات کو دنیا میں اہمیت ہی اس لیے دی جاتی ہے،ان تعلقات کی پہچان ہی یہی ہے کہ دونوں ممالک کے درمیان تسلسل کے ساتھ اعلی سطح کے دوروں کا تبادلہ ہوتا رہتا ہے، پاکستان اور سعودی عرب کے درمیان ہمہ وقت مختلف شعبوں میں اعلی سطح کے دوروں پر بات چیت جاری رہتی ہے۔انھوں نے کہا کہ سعودی وزیر خارجہ کے دورے کی تاریخوں کا فی الحال تعین نہیں کیا گیا، جوں ہی تاریخوں کا تعین ہوگا اس حوالے سے باضابطہ اعلان کیا جائے گا۔سفارتی ذرائع کے مطابق پاکستان آنے والے وفد میں سعودی فرماں روا سلمان بن عبدالعزیز کے صاحبزادے سعودی وزیر توانائی عبدالعزیز بن سلمان بھی شامل ہوں گے۔اس دورے میں  پاکستان میں سعودی آئل ریفائنری لگانے کے معاملے پر پیش رفت کا بھی جائزہ لیا جائے گا جبکہ دیگر شعبوں میں پاکستان اور سعودی عرب کے درمیان تعاون کی موجودہ سطح اور مستقبل میں اسے فروغ دینے کے حوالے سے باہمی معاملات پر تبادلہ خیال کیا جائے گا۔ سعودی وزیرخارجہ دورہ پاکستان کے دوران صدر عارف علوی، وزیراعظم عمران خان، وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی اور آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سمیت دیگر سیاسی رہنماؤں سے ملاقاتیں کریں گے۔ان ملاقاتوں میں مشرق وسطیٰ سمیت خطے کی تازہ ترین صورت حال پر بات چیت کی جائے گی۔

یاد رہے کہ گذشتہ روز وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی  نے بھی کہا تھا کہ خارجہ پالیسی کے حوالے سے وزیراعظم، میرے اور دفتر خارجہ کے بیانات ریکارڈ کا حصہ ہیں، اسی خارجہ پالیسی کا نتیجہ ہے کہ سعودی عرب کا ایک بہت بڑا وفد جلد پاکستان آرہا ہے جس میں ان کے وزیر خارجہ سمیت اہم شخصیات شامل ہوں گی، یہ سب اس بات کی غمازی کرتا ہے کہ ہمارے سعودی عرب کے ساتھ دو طرفہ تعلقات مزید مستحکم ہو رہے ہیں۔

مزید :

عرب دنیا -