مائیکروفنانس کریڈٹ گارنٹی فیسیلٹی کی ہدایات میں ترامیم جاری

مائیکروفنانس کریڈٹ گارنٹی فیسیلٹی کی ہدایات میں ترامیم جاری

  



کراچی(اکنامک رپورٹر)سٹیٹ بینک کی مائیکروفنانس کریڈٹ گارنٹی فیسیلٹی کی ہدایات میں ترامیم کر دیں ۔سٹیٹ بینک آف پاکستان نے مائیکروفنانس کریڈٹ گارنٹی فیسیلٹی کی ہدایات پرنظر ثانی کی ہے جن میں کمرشل بینکوں، ترقیاتی مالی اداروں کو چھوٹے مائیکروفنانس بینکوں،مائیکروفنانس اداروں کو قرض دینے کے لیے ساٹھ فیصد تک رسک کوریج کی پیشکش کی گئی ہے۔ توقع ہے کہ اس سہولت سے چھوٹے مائیکروفنانس بینک مائیکرو فنانس ادارے کمرشل بینکوں ترقیاتی مالی اداروں سے قرض حاصل کرکے مائیکروفنانس کلائنٹس کو دے سکیں گے۔

یاد رہے کہ مائیکروفنانس کریڈٹ گارنٹی فیسیلٹی، مائیکروفنانس اداروں کے لیے مارکیٹ پر مبنی اور طویل مدتی مالکاری ہے۔ حکومت کی جانب سیاٹھارہ ارب پچاس کروڑ روپے کے بیل آؤٹ پیکیج کے باوجود اسٹیل مل کے حالات بہتر نہیں ہوسکے ،، ادارے پر صرف گیس واجبات کی مد میں تیس ارب روپے کا قرض چڑھ چکا ہے .سوئی سدرن گیس کمپنی کی جانب سے بھجوائے گئے نومبر کے بل میں اسٹیل مل پر چودہ ارب اڑتیس کروڑ پینتیس لاکھ بیاسی ہزار ایک سو نوے روپے کی رقم واجب الادا ہے جبکہ مذکورہ بل میں تاخیر ہونے پر سرچارج کی مد میں اٹھائیس کروڑ بیس لاکھ اکتیس ہزار تئیس روپے لگائے گئے ہیں۔سوئی سدرن گیس کمپنی اپنے واجبات کی وصولی کیلئے متعدد بار اسٹیل مل کو یاددہانی کراچکی ہے جبکہ گزشتہ دنوں سوئی سدرن کمپنی کی جانب سے اسٹیل مل کو فراہم کی جانے والی گیس پریشر میں کمی بھی رہی جس کے نتیجے میں اسے تھرمل پاور پلانٹ چلانے میں مشکلات کا سامنا رہا۔

مزید : کامرس


loading...