نواز شریف کے آگے پیچھے 6,6گاڑیاں پھر بھی مظلوم ؟ زرداری

نواز شریف کے آگے پیچھے 6,6گاڑیاں پھر بھی مظلوم ؟ زرداری

تونسہ(مانیٹرنگ ڈیسک، نیوز ایجنسیاں) پیپلز پارٹی کے شریک چیئرمین آصف زرداری کا کہنا ہے امید ہے انتخابات وقت پر ہوں گے اور اس بار پنجاب میں ہی حکومت بنانی ہے۔ گزشتہ روزتونسہ میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے آصف زرداری کا مزید کہنا تھا ہم نے کیسز بھی بھگتے ہیں اور نوازشریف کے 6 گاڑیاں آگے اور 6 پیچھے ، یہ کیسے مظلوم ہیں، اپوزیشن میں خود ہیں اور حکومت بھی ان کی ہے، وزیراعظم اور وزیراعلیٰ بھی ان کا ہے اس کے باوجود مظلوم ہیں۔ مظلوم تو ہم تھے ہم بکتر بند میں آتے تھے، پہلے جج نے مجھے سزا دی ،پھر وہ سزا سپریم کورٹ نے ختم کی ۔ آصف زرداری نے مزید کہا کہ یہ منصوبے کا ایسے افتتاح کرتے ہیں جس کی شروعات اور اختتام ہی نہیں ہوتا جبکہ انہوں نے سی پیک کو سمجھا ہی نہیں، ان کے اور منگولیا کے سی پیک کو دیکھ لیں، آپ نے چین سے ٹرامے لگوائی ہیں، یہ سوچ سوچ کا فرق ہے۔پانامہ باہر سے شروع ہو ا ، یہ کسی سیف الرحمان نے شروع نہیں کیا، یہ معاملہ عالمی سطح پر اٹھا جس میں یہ بھی شامل ہوگئے۔آصف زرداری کا کہنا تھا یہاں آکر واضح ہو گیا لاہور اور جنوبی پنجاب میں زمین آسمان کا فرق ہے، پنجاب حکومت کی تنگ نظری ہے کہ جنوبی پنجاب میں ہمارے ایم پی اے کو فنڈز نہیں دیئے جاتے، اس کے برعکس جب ہماری حکومت تھی تو ہم نے موجودہ حکمران جماعت کے تمام ایم پی ایز اور ایم این ایز کو ناصرف فنڈز جاری کئے بلکہ انہیں تمام مراعات بھی فراہم کی گئیں، چوہدری نثار کا بجٹ ہمارے اپنے ایم این ایز سے بھی زیادہ تھا، یہ ہمارے اور مسلم لیگ ن کے فعل میں فرق ہے۔ پاناما کیس میں نااہلی کی بعد سابق وزیراعظم مظلوم بن گئے ہیں، جو لوگ عدلیہ کی ناانصافی کی بات کرتے ہیں وہ بتائیں جب شہبازشریف ایک دن سیف الرحمان سے بات کرتے تھے اوردوسرے روز وہ کام ہوجاتا تھا۔ ایک سوال کے جواب میں سابق صدر نے کہا ہمیں بھارت سے کوئی مسئلہ نہیں، ہمارا اختلاف نریندرا مودی کی سوچ سے ہے، مودی اپنے ملک کو ایک سیکولرازم قرار دیتا ہے لیکن مودی کے بھارت میں سیکولرازم نظر نہیں آرہا کیونکہ اب دنیا پر نہرو والا بھارت نہیں بلکہ مودی کا ہے، بھارتی وزیراعظم نے سستی شہرت کیلئے ہٹلر کی طرح نفرت کی سیاست کی جو اب بھی جاری ہے۔ انہوں نے کہا پیپلزپارٹی کے رہنماؤں نے ہر اچھے اور برے وقت میں ساتھ دیا، ہم نے ہر دور میں کیسز کا سامنا کیا۔ امید ہے سینیٹ الیکشن وقت پر ہوں گے۔آصف زرداری نے راؤ انوار سے متعلق سوال پر جواب دینے سے گریز کیا۔

زرداری

مزید : صفحہ اول


loading...