اسحاق ڈار کے اثاثوں میں 91 گنا اضافہ ہوا ، دستاویزات عدالت میں پیش

اسحاق ڈار کے اثاثوں میں 91 گنا اضافہ ہوا ، دستاویزات عدالت میں پیش

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)سابق وزیرخزانہ اسحاق ڈار کے خلاف اثاثہ جات ریفرنس کی سماعت کے دوران سیکیورٹیز اینڈ ایکسچینج کمیشن آف پاکستان (ایس ای سی پی) کی افسر سدرہ منصور نے بیان ریکارڈ کروایا اور عدالت کو اسحاق ڈار کی کمپنیوں سے متعلق دستاویزات پیش کردیں۔احتساب عدالت کے محمد بشیر نے اسحاق ڈار کے خلاف نیب ریفرنس کی سماعت کی۔سماعت کے دوران گواہ سدرہ منصور نے عدالت کو بتایا کہ اسحاق ڈار کے اثاثوں میں 1993 سے 2009 کے دوران 91 گنا اضافہ ہوا۔آج کی سماعت میں ایس ای سی پی کے ڈپٹی رجسٹرار سلمان سعید کو بھی بیان ریکارڈ کرنے کے لیے طلب کیا گیا تھا۔پیر کو ہونے والی گذشتہ سماعت کے دوران عدالت نے 6 گواہوں کے بیانات ریکارڈ کیے تھے، جن میں شکیل انجم، اقبال حسن، زوار منظور اور عمر دراز گوندل، پنجاب انڈسٹریز کے ڈسٹرکٹ آفیسر اظہر حسین اور آئی آر ایس لاہور کے کمشنر اشتیاق احمد شامل تھے۔

اسحاق ڈاراثاثے

مزید : کراچی صفحہ اول


loading...