کبیروالا ہسپتال‘ لیڈی ڈاکٹر کی مبینہ غفلت سے بچہ جاں بحق‘ زچہ کی حالت غیر

کبیروالا ہسپتال‘ لیڈی ڈاکٹر کی مبینہ غفلت سے بچہ جاں بحق‘ زچہ کی حالت غیر

جودھ پور ،نواں شہر (نمائندہ پاکستان )تحصیل ہیڈ کواٹر ہسپتال کبیروالا میں لیڈی ڈاکٹر کی مبینہ غفلت سے بچہ جاں بحق ،زچہ کی حالت غیر ،لیبارٹری اسسٹنٹ نے ورثا سے خون کی بوتل دینے کے لیے 3ہزاربٹور لیے ،ورثا ء کا لیڈی ڈاکٹر اور لیبارٹری اسسٹنٹ کے خلاف ہسپتال کے سامنے احتجاجی(بقیہ نمبر46صفحہ12پر )

مظاہرہ ،ہسپتال انتظامیہ کے خلاف شدید نعرے بازی تفصیل کے مطابق گذشتہ روز تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال کبیروالا میں لیڈی ڈاکٹر سمیرا کی غفلت سے دوران ڈلیوری بچہ جاں بحق ہوگیا اورلیبارٹری اسسٹنٹ ریاض بھٹی نے ورثا ء کو بلیک میل کرتے ہوئے 3ہزار بٹو ر لیے اس سلسلے میں ورثا ء نے ہسپتال کے سامنے لیڈی ڈاکٹر اور لیبارٹری اسسٹنٹ کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کیا مظاہرین نے پلے کارڈ اٹھا رکھے تھے اور ہسپتال انتظامیہ کے خلاف سخت نعرے بازی کی اس موقع پر محمد صفدر نے میڈیا کواپنے بیان میں بتایا کہ گذشتہ روز میں اپنی بیوی کو ڈلیوری کیس کے سلسلے میں کبیروالا ہسپتال میں لے آیا تو ہسپتال میں ڈیوٹی پر موجو د لیڈی ڈاکٹر سمیرانے ہمیں کہا کہ خون کا بندوبست کرو میں بڑی مشکل سے ایک بوتل کا انتظام کیا خون کی اور ضرورت ہونے پر لیڈی ڈاکٹر نے ہمیں لیبارٹری میں بھیجا جہاں پر موجودلیبارٹری اسسٹنٹ ریاض بھٹی نے ہم سے ایک بوتل خون کی رقم طلب کی جو کہ میں نے ادا کردی اور بعد میں لیڈی ڈاکٹر کی غفلت اور آپریشن لیٹ کرنے کی وجہ سے میرا بچہ دوران ڈلیوری جاں بحق ہوگیا جبکہ میری بیوی کی جان بھی خطرے میں ہے میری وزیر اعلی پنجاب ،صوبائی وزیر صحت ،سیکر ٹری صحت ،اور ڈپٹی کمشنر خانیوال سے پر زور اپیل ہے کہ مجھے انصاف دیا جائے اور ہسپتال انتظامیہ کے خلاف کاروائی کی جائے ۔لیبارٹری اسسٹنٹ ریاض بھٹی کا مؤقف لینے کے لیے میڈیا ٹیم جب ہسپتال پہنچی تو اس نے کہا کہ میں نے ان سے سیکیورٹی کے لیے 2500لیے ہیں۔

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...