معیاری اور ملاوٹ سے پاک اشیاء خورنوش کی فراہمی کیلئے کوشاں ہیں:قلندر خان لودھی

معیاری اور ملاوٹ سے پاک اشیاء خورنوش کی فراہمی کیلئے کوشاں ہیں:قلندر خان ...

نوشہرہ(بیورورپورٹ) صوبائی وزیر خوراک حاجی قلندر خان لودھی نے کہا ہے کہ موجودہ صوبائی حکومت نے صوبے کی تاریخ میں پہلی بار بینکوں سے قرضے نہ لے کر اپنے محدود وسائل بروئے کار لاتے ہوئے صوبہ بھر میں گندم کی خریداری کا عمل مکمل کردیا ہے اور یہ ثابت بھی کردیا ہے کہ خیبرپختونخوا کی محکمہ خوراک کے وسائل ایمانداری سے بروئے کار لائے جائے تو ہم قرضوں سے خریدی گئی گندم سے نجات پا سکتے ہیں موجودہ صوبائی حکومت عوام کو ریلیف پہنچانے اور معیاری و ملاوٹ سے پاک اشیائے خورد نوش کی فراہمی کیلئے کوشاں ہیں اور اس سلسلے میں صوبہ بھر میں غیرمعیاری گندم کو تلف کردیا ہے اور عوام کو معیاری آٹے کی فراہمی یقینی بنائی گئی ہے خوراک کے معاملے میں کوئی سمجھوتہ نہیں کریں گے ان خیالات کااظہار انہوں نے اضاخیل نوشہرہ میں محکمہ خوراک کا مرکزی غلہ گودام میں دفتری امور کیلئے مزید دو کمروں کی تعمیر کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا اس موقع پر سیکرٹری محکمہ خوراک، ڈائریکٹر محکمہ خوراک اور فوڈ کنٹرولر محمدہاشم خان بھی موجود تھے اس موقع پر ایس ڈی او سی اینڈ ڈبلیو جہانزیب خان نے صوبائی وزیر کو دوکمروں کی تعمیر پر بریفننگ دیتے ہوئے کہا کہ دو کمروں کی تعمیر جن میں باتھ روم بھی شامل ہیں کے لئے 27 لاکھ روپے مختص کئے گئے تھے لیکن ہم نے حکومتی خزانے کو فائدہ پہنچاتے ہوئے 21 لاکھ 50 ہزارروپے کی مالیت سے کمرے تعمیر کئے جس کی وجہ سے 5 لاکھ 50 ہزار روپے کی بچت ہوئی قلندر خان لودھی نے کہا کہ محکمہ خوراک کے افسران اپنی ڈیوٹیاں ایمانداری سے سرانجام دے کیونکہ اگر محکمہ خوراک کے افسران اپنی ذمہ داریاں ایمانداری سے سرانجام دیں گے تو سرکاری ڈیوٹی کے ساتھ ساتھ خدمت خلق کا ثواب بھی حاصل کریں گے انہوں نے مزیدکہ ملکی تاریخ میں پہلی بار خیبرپختونخوا میں پاکستان تحریک انصاف کی حکومت نے محکمہ خوراک کے افسران واہلکاروں کی سیل اپ گریڈیشن کرکے ایک تاریخی کارنامہ سرانجام دیا ہے جس کا سہرا عمران خان اور وزیر اعلیٰ پرویز خٹک کے سر ہے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...