بھتہ خوری میں سزا یافتہ مجرم کی سزا کالعدم قرار

بھتہ خوری میں سزا یافتہ مجرم کی سزا کالعدم قرار

کراچی (اسٹاف رپورٹر)سندھ ہائیکورٹ نے بھتہ خوری اور غیرقانونی اسلحہ کیس میں سزا یافتہ مجرم کی جانب سے ماتحت عدالت کی سزا کے خلاف دائر اپیل کی درخواست پر فیصلہ سنا تے ہوئے مجرم کی سزا کو کالعدم قرار دے دیا ہے ۔منگل کو سندھ ہائیکورٹ میں بھتہ خوری اور غیرقانونی اسلحہ کیس میں سزا یافتہ مجرم کی جانب سے ماتحت عدالت کی جانب سے دی جانے والی سزا کے خلاف دائر اپیل کی درخواست پر سماعت جسٹس نعمت اللہ پھلپوٹو کی سربراہی قائم دورکنی بینچ نے کی۔عدالت کے روبرو مجرم کے وکیل نے موقف اپنایا کہ انکے موکل کے خلاف استغاثہ کے پاس ٹھوس شواہد موجود نہیں اور انکا موکل 4 سال کی سزا جیل میں اب تک کاٹ چکا ہے۔وکیل صفائی نے عدالت سے استدعا کی کہ سزا کو کالعدم دے کر انکے موکل کو بری کیا جائے.عدالت نے وکیل صفائی کا موقف سننے کے بعد بھتہ خوری اور غیر قانونی اسلحہ کے کیس میں مجرم احمد الدین کو انسداددہشتگردی کی عدالت کی جانب سے دی جانے والی 14 سال قید کی سزا کو کالعدم قرار دیتے ہوئے انہیں بری کردیا۔واضح رہے پولیس نے احمد الدین کو سبزی فروش سے بھتہ طلب کرنے اور غیر قانونی اسلحہ رکھنے کے الزام میں گرفتار کیا تھا.انسداددہشتگردی کی خصوصی عدالت نے احمد الدین کو دونوں مقدمات میں مجموعی طور پر 14 سال قید کی سزا سنائی تھی۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر


loading...