شوہر سے تنگ عرب خاتون نے طلاق لینے کی کوشش میں اپنے شوہر کے موبائل فون کے ساتھ وہ کام کردیا جو تاریخ میں آج تک کسی بیوی نے نہیں کیا، حقیقت جان کر آپ بھی اس چالاکی پر دنگ رہ جائیں گے

شوہر سے تنگ عرب خاتون نے طلاق لینے کی کوشش میں اپنے شوہر کے موبائل فون کے ساتھ ...
شوہر سے تنگ عرب خاتون نے طلاق لینے کی کوشش میں اپنے شوہر کے موبائل فون کے ساتھ وہ کام کردیا جو تاریخ میں آج تک کسی بیوی نے نہیں کیا، حقیقت جان کر آپ بھی اس چالاکی پر دنگ رہ جائیں گے

  


دبئی (ڈیلی پاکستان آن لائن) متحدہ عرب امارات سے تعلق رکھنے والی ایک شادی شدہ خاتون نے خود کو تین سال پر محیط تشدد اور غیر متوازن رشتے سے چھٹکارا دلوانے کیلئے طلاق لینے کا سب سے چالاک ترین طریقہ اختیار کرلیا۔

ڈیلی پاکستان گلوبل کے مطابق اماراتی خاتون نے کئی بار اپنے شوہر سے طلاق لینے کی کوشش کی لیکن اسے اس میں کامیابی حاصل نہیں ہوسکی ۔ ایک رات خاتون نے اپنے سوتے ہوئے شوہر کا موبائل فون اٹھایا اور اس سے اپنے نمبر پر تین طلاق کا پیغام ارسال کردیا۔اپنے شوہر کے موبائل سے موصول ہونے والے میسج لے کر یہ خاتون عدالت پہنچ گئی اور مقدمہ دائر کردیا۔ عدالت میں جب خاتون سے اس پیغام کا ذریعہ پوچھا گیا تو وہ پکڑی گئی اور اس نے خود ہی طلاق کا میسج بھیجنے کا اعتراف کرلیا اور بتایا کہ اس نے انتہائی ہیجانی کیفیت میں یہ پیغام بھیجا تھا۔جب شوہر کو اپنی بیوی کی اس حرکت کا پتہ چلا تو اس نے اسے طلاق دینے کی بجائے کہا کہ وہ اب اپنی بیوی کیلئے طلاق کا حصول انتہائی مشکل کردے گا اور جس حد تک وہ اس مقدمے کو گھسیٹ سکا گھسیٹے گا۔

”میں تمہیں تھپڑ ماروں گا اگر۔۔۔“ یورپی ملک میں پاکستانی سفارت خانے کا عملہ اوور سیز پاکستانیوں کیساتھ کیسا سلوک کرتا ہے؟ ایسی ویڈیو سامنے آ گئی کہ آپ بھی ہکا بکا رہ جائیں گے

الرواد ایڈووکیٹس اینڈ لیگل کنسلٹنٹس کے وکیل حسن محسن الیاس نے اس معاملے پر تفصیلی روشنی ڈالی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ای میلز، ٹیکسٹ میسجز، واٹس ایپ پیغامات یا لکھنے کیلئے استعمال ہونے والے دیگر ڈیجیٹل ذرائع سے بھیجے گئے طلاق کے پیغامات کا پہلے ترجمہ کیا جاتا ہے جس کے بعد انہیں عدالت میں پیش کیا جاتا ہے، دبئی کی فیملی کورٹس میں انہیں تحریری شہادت کے طور پر قبول کیا جاتا ہے ۔

مزید : ڈیلی بائیٹس /عرب دنیا


loading...