بلوں کی عدم ادائیگی‘ ڈسپوزل سٹیشن بند‘ شہر گندے پانی میں ڈوب گیا

بلوں کی عدم ادائیگی‘ ڈسپوزل سٹیشن بند‘ شہر گندے پانی میں ڈوب گیا

  



شاہ جمال (نمائندہ پاکستان)ترقیاتی فنڈز جاری نہ ہونے کی وجہ سے شاہ جمال میں صفائی کی صورتحال بد تر ڈسپوزل پمپس عدم ادائیگی بل بجلی کے باعث بند ہرطرف گندے پانی کا راج مین بازار گندے پانی کا دریا بن گیا۔ شہریوں محمد اطہر حسن زرگر،محمد جاوید اسلم،محمد نوید اسلم،طیب عباس کھوسہ،محمد طارق عباس کھوسہ،میاں آصف رحیم،حافظ محمد ابراہیم،ملک دلشاد ملانہ،محمد ذیشان خان بلوچ،محمد نوید خان ساحل،فیصل شہزاد خان بھٹہ،شیخ عابد حسین،میاں محمداسلم تھہیم،محمدسجاول،مرید عباس،محمد اکرم جوئیہ،محمد سعد اکرم ودیگر(بقیہ نمبر38صفحہ12پر)

نے بتایا کہ شاہ جمال ضلع مظفرگڑھ کا بڑا قصبہ ہے اور بڑی آبادی کا حامل شہر ہونے کی وجہ سے اسیٹاؤن کمیٹی کا درجہ دیا گیا ہے قبل اس کے یونین کونسل شاہ جمال کی ہر ماہ باقاعدگی سے جاری گرانٹ سے صفائی کا سلسلہ جاری رہتا تھا کبھی اسطرح کی صورتحال خراب نہ ہوئی اب جبکہ ٹاؤن کمیٹی کا درجہ دیئے جانے کے بعد سے صفائی نہ ہونے کے باعث سیوریج بند اور نکاسی نہ ہونے کی وجہ سے گلیاں بھرنے کے بعد پہلے پانی ان کے گھروں میں داخل ہوا بعد ازاں مین ہولز اوور فلو کر جانے سے گندا پانی مین بازاروں میں داخل ہو گیا ہے گھروں سے نکلنا تو پہلے ہی محال ہو چکاتھا اب مین بازاروں نے بھی بڑی نہروں کی شکل اختیار کر لی ہے جس کی وجہ سے نہ صرف پیدل گزرنا محال ہوا ہے لوگوں کی آمد و رفت نہ ہونے کی وجہ سے ان کے کاروبار بند ہو چکے ہیں بلکہ مین بازار کے بعد جامع مسجد نوری تا بس سٹینڈ مظفرگڑھ تا کالی پل شاہ جمال دورویہ روڈ نشیب میں ہونے کی وجہ سے دلدل بن چکا ہے جبکہ ہائیر سیکنڈری سکول شاہ جمال میں تین ہزار سے زائد طلباء اور علاقہ میں قائم دیگر بیسیوں تعلیمی اداروں میں ہزاروں طلبہ اسطرح رورل ہیلتھ سنٹر شاہجمال، مرکزی جنازہ گاہ، مرکزی قبرستان،مرکزی تین جامع مساجد،دو عدد بینک،ڈاکخانہ اور بس سٹینڈز ہونے کے باعث ہزاروں افراد کی آمدورفت کے لیئے اکلوتا راستہ بند ہے گاڑیوں کے پھنسنے بوڑھوں اور بچوں کے گرنے کے متعدد واقعات روزانہ ہوتے ہیں اسطرح جنازہ گاہ کی بجائے متبادل جگہوں پر جنازہ پڑھنے اور میت کو کندھا دیکر قبرستان تک لے جانے کی بجائے ٹریکٹر ٹرالیوں پر قبرستان لے جایا جاتاہے ہے ان کا کہنا تھا کہ تبدیلی کے بعد تو ان کی زندگی عذاب بن چکی ہے اس طرح نیشنل یوتھ اسمبلی کے ممبر اور نوجوان سیاسی سماجی راہنما میاں علی ارسلان نے علاقہ کے نوجوانوں کے ہمراہ احتجاج کرنے کا اعلان کرتے ہوئیکہا کہ گنجان آباد شاہجمال میں ترقیاتی فنڈز خرچ کرنے کی بجائے منتخب ممبر صوبائی اسمبلی نے نواحی علاقوں میں خرچ کر رہے ہیں جبکہ شاہجمال صوبائی حلقہ پی پی 276کا مرکزی شہر ہے رابطہ کرنے پر ایڈ منسٹریٹر ٹاؤن کمیٹی شاہجمال آصف نواز جتوئی نے بتایا کہ ٹاؤن کمیٹی شاہجمال کو ابھی تک ایک روپیہ تک جاری نہیں ہوا اور فنڈز سابقہ یونین کونسل شاہ جمال کو دیئے جارہے ہیں اسطرح ایڈمنسٹریٹر یونین کونسل شاہجمال محمد رمضان نے رابطہ پر بتایا کہ وہ یونین کونسل کے فنڈز ٹاؤن کمیٹی کو منتقل نہیں کر سکتے اور نہ ہی وہ حال ہی میں بننے والی ٹاؤن کمیٹی جو کہ سابقہ یونین کونسل شاہجمال ہے کی صفائی پر خرچ کرا سکتے ہیں ایم پی اے پی پی 276وپارلیمانی سیکرٹری سردار عون حمید ڈوگر نے بتایا کہ انہیں دس کروڑ کے فنڈز جاری ہوئے جن سے حلقہ بھر میں صاف پانی کے دس پلانٹ اور دیگر چھوٹے بڑے منصوبے مکمل ہو رہے ہیں مزید ترقیاتی منصوبہ جات میں شاہجمال کو ترجیح دی جائیگی۔

ڈسپوزل سٹیشن

مزید : ملتان صفحہ آخر