حکومتی صفوں میں انتشار پھیلانے کی سازش ناکام ہوگئی‘ خاور علی شاہ

  حکومتی صفوں میں انتشار پھیلانے کی سازش ناکام ہوگئی‘ خاور علی شاہ

  



کبیروالا(تحصیل رپورٹر)حکومتی صفوں میں انتشار پھیلانے کی سازش ناکام ہوگئی ہے،اقتدار میں آنے کے خواب دیکھنے والوں کو موجودہ حکومت کی مدت پوری ہونے تک انتظار اور صبر کرنا ہوگا،،پاکستان کو ”کرپشن“ سے پاک ریاست بنانے کیلئے کرپٹ عناصر کو احتساب کے سخت شکنجے میں جکڑنے کا عمل مزید تیز کرنے کی ضرورت ہے،ان خیالات کا اظہار قائد سید گروپ وممبر صوبائی اسمبلی ڈاکٹر سید خاور علی شاہ نے لاہور واپسی کے بعد قتال پور میں اپنی رہائشگاہ پر عمائدین علاقہ،کارکنان اور میڈیا سے(بقیہ نمبر13صفحہ12پر)

گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ امریکہ کابیت المقدس کو اسرائیلی دارالحکومت قرار دینا”امن“ کے نام پر دہشت گردی ہے، امریکہ،اسرائیل اور انڈیا عالم اسلام کے خلاف گھناؤنی سازشوں میں مصروف ہیں،بیت المقدس کو اسرائیل کا دارالحکومت،انڈیامیں متنازعہ شہریت قانون اور مقبوضہ کشمیر میں کشمیری عوام کو کرفیو کی آڑ میں یرغمال بنانا کھلم کھلا اسلام دشمنی ہے،مسلم ممالک، دشمنوں کی سازشوں کا شکار ہونے کی بجائے اپنے اندر اتفاق واتحاد پیدا کرکے کفریہ طاقتوں کی مسلم کش پالیسیوں کا ڈٹ کر مقابلہ کریں،سازشی عناصر کی جانب سے حکومتی صفوں اور اتحاد میں ”دراڑیں“ کا خواب کسی صورت بھی شرمندہ تعبیر نہیں ہوگا،عوام کے بھاری مینڈیٹ کے ساتھ اقتدار میں آنیوالی تحریک انصاف اپنی مدت پورا کرے گی۔انہوں نے کہا وزیراعظم عمران خان کا ممبران اسمبلی کے تحفظات پر توجہ دینے کا عمل قابل ستائش ہے، وفاقی اور پنجاب حکومت میں ”ان ہاؤس“ تبدیلی کی باتیں ”ڈس انفارمیشن“ کے سوا کچھ نہیں ہے،اپوزیشن کے پاس چائے کی پیالی میں طوفان اٹھانے کے علاوہ دوسر ا کوئی آپشن نہیں ہے،حکومت ”کرپشن“کے خاتمہ کیلئے سنجیدہ اقدامات کو یقینی بنارہی ہے،ٹرانسپیرنسی انٹرنیشنل کے وضاحتی بیان کے بعد ”مخالفین“ کو حقائق کے منافی بیانات دینے پر پاکستانی عوام سے معافی مانگنی چاہیے۔ اس موقع پر زاہد حسین بھٹی،چوہدری محمد قاسم ارائیں،حفیظ سعیدی،راؤ آصف سعیدی،محمد اسلم رفیق،حسن امام شاہ،ملک حق نواز لپرا،راؤ نوشاد احمد اور دیگر بھی موجود تھے۔

خاور علی شاہ

مزید : ملتان صفحہ آخر