تھر انرجی نے 330میگاواٹ پاور پراجیکٹس کا فنانشل کلوز حاصل کرلیا

تھر انرجی نے 330میگاواٹ پاور پراجیکٹس کا فنانشل کلوز حاصل کرلیا

  



کراچی (پ ر) پاکستان کی سب سے بڑی آئی پی پی حبکو کی ذیلی کمپنی تھر انرجی لمیٹڈ نے نے تھربلاک 2میں 330میگا واٹ پاور پراجیکٹس کا فنانشل کلوز حاصل کرکے اہم سنگِ میل عبور کرلیا۔تھر انرجی لمیٹڈحبکو اور فوجی فرٹیلائزر کمپنی کے اشتراک سے قائم کردہ پہلا منصوبہ ہے جس کے تحت تھر بلاک IIکے مقامی کوئلے سے 330میگا واٹ بجلی پیدا کی جائے گی۔کمپنی سے جاری اعلامیئے کے مطابق حبکو کمپنی میں 60فیصد سرمایہ کاری کے ساتھ سب سے بڑا سرمایہ کار اور ایف ایف سی 30فیصد سرمایہ کے ساتھ کمپنی کے حصص میں دوسرا بڑا سرمایہ کار ہے جبکہ چائنا مشینر ی انجینیئرنگ کارپوریشن ٹیل پاور انوسٹمنٹ لمیٹڈ(CPTIL)نے کمپنی میں 10 فیصد سرمایہ کاری کر رکھی ہے۔اس موقع پر تھر انرجی لمیٹڈ کے چیف ایگزیکٹو آفیسر سلیم اللہ میمن نے کہا کہ اس منصوبے کیلئے کمپنی نے چائنا ڈیویلپمنٹ بینک کو غیر ملکی مالی اعانت کیلئے مرکزی منتظم اور حبیب بینک کو مقامی مالی اعانت کیلئے بطور مرکزی منتظم شامل کررکھا ہے۔انہوں نے مزید کہا کہ ہمیں امید ہے کہ مضبوط اور پیشہ ور اپسانسرز کے تعاون سے یہ منصوبہ مختص لاگت میں بروقت مکمل ہوجائے گا۔اس موقع پر حبکو کے چیف ایگزیکٹوآفیسر خالد منصور نے کہا کہ یہ منصوبہ پاکستان کیلئے گیم چینجرثابت ہوگاکیونکہ اس سے ملک میں توانائی کے تحفظ کو یقینی بنانے میں مدد ملے گی۔انہوں نے مزید کہا کہ تھر انرجی لمیٹڈ کی جانب سے لگایا جانے والا یہ منصوبہ پاکستان میں مقامی کوئلے پر مبنی پاور پلانٹس کی سیریز کے ابتدائی منصوبوں میں سے ہے جس سے ملک کو خاطر خواہ غیر ملکی زرِ مبادلہ کی بچت ہوگی۔حب پاور کمپنی حب، نارووال اور آزاد کشمیر میں اپنے چاروں پلانٹس کے ذریعے 2920میگاواٹس سے زیادہ بجلی پیداکرنے کی صلاحیت رکھتی ہے۔ حب پاور کمپنی پاکستان کی واحد پاور کمپنی ہے جس کے چین پاکستان اقتصادی راہداری منصوبے میں 4منصوبے حب میں چائنا پاور حب جنریشن کمپنی لمیٹڈ (CPHGC)، تھر انرجی لمیٹڈ(TEL)، تھل نوا پاور تھر لمیٹڈ اور تھر کول بلاک IIمیں سندھ اینگرو کول مائننگ کمپنی (SECMC) شامل ہیں۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر