صوابی،ایل ایچ وی کے قتل کیخلاف سہ روزہ سوگ کا اعلان

      صوابی،ایل ایچ وی کے قتل کیخلاف سہ روزہ سوگ کا اعلان

  



صوابی(بیورورپورٹ) محکمہ صحت ضلع صوابی کی لیڈی ہیلتھ ورکرز نے پولیو مہم کے دوران قتل کئے جانے والے دو ورکرز شکیلہ اور غنچہ کی قتل پر تین روز ہ سوگ منانے کا اعلان کر دیا۔ اس فیصلے کا اعلان تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال کالو خان میں ایک بڑا اجلاس منعقدہوا جس میں حکومت سے شہید ہونے والی ورکرز کو شہداء پیکیج اور ان کے ورثاء کو محکمہ صحت میں ملازمت دینے کا مطالبہ کر تے ہوئے اعلان کیا کہ جب تک ان کو سیکیورٹی نہیں دی جاتی تب تک وہ پولیو مہم کا حصہ نہیں بنے گی اسی طرح ہر دو ہفتے بعد ہونے والی پولیو مہم میں حصہ نہیں لینگے۔ تحصیل رزڑ کے علاقہ پرمولی و دیگر علاقوں میں اس واقعہ کے خلاف پولیو مہم بند رہی لیڈی ہیلتھ سپر وائزر نے لیڈی پولیو ورکرز کو پولیو کے قطرے پلوانے سے منع کیا جس کی وجہ سے تحصیل رزڑ کے مختلف علاقوں میں پولیو مہم متاثر رہی۔انہوں نے مطالبہ کیا کہ قاتلوں کو جلد از جلد گرفتار کر کے قرار واقعی سزا دی جائے۔ ایل ایچ وی کو صرف این آئی ڈی تک محدود کیا جائے اور اسے پولیو سے استثنیٰ قرار دیا جائے انہوں نے کہا کہ جس کی غفلت سے یہ واقعہ رونما ہوا س کی تحقیقات کر کے کارروائی کی جائے۔ڈی پی او صوابی عمران شاہد نے بتایا کہ ضلع صوابی میں پندرہ سو پولیس نفری پولیو مہم میں حصہ لے رہی ہے جب کہ مزید دو سو پولیس اہلکاروں کو ہزارہ سے طلب کر لیا گیا ہے اور ضلع بھر میں دفعہ 144نافذ کر دی گئی ہے۔ ڈی سی صوابی شاہد محمود نے بتایا کہ واقعہ کے بعد انسداد پولیو مہم میں مشکلات درپیش ہے تاہم پولیو مہم میں مشکلات کو حل کرینگے۔ ضلع بھر میں پانچ روزہ پولیو مہم جاری رہے گی۔ پولیو ٹیموں کو سیکیورٹی فراہم کی جارہی ہے دریں اثناء انسداد پولیو مہم کے دوسرے روز بھی سیکیورٹی مزید سخت کر دی گئی ڈی پی او صوابی خود سیکیورٹی کی نگرانی کر رہے ہیں ڈی سی صوابی شاہدمحمود اور ڈی پی او صوابی عمران شاہد نے موضع پر مولی جا کر شہداء کے خاندان کے ساتھ دلی تعزیت و ہمدردی کااظہار کیا اور ان کی مغفرت کے لئے فاتحہ خوانی کی۔

مزید : پشاورصفحہ آخر