لندن اولمپکس سٹیڈیم میںخالی نشستوں پر ٹکٹوں کی بلیک مارکیٹینگ کی تحقیقات شروع

لندن اولمپکس سٹیڈیم میںخالی نشستوں پر ٹکٹوں کی بلیک مارکیٹینگ کی تحقیقات ...

لندن (نیٹ نیوز) لندن اولمپکس کے دوران اسٹیڈیم کے اندر شائقین کی کم حاضری اور خالی نشستوں کا نوٹس لیتے ہوئے آرگنائزنگ کمیٹی نے تحقیقات شروع کردیں۔ افتتاحی روز لندن کے ایکواٹک سینٹر میں سوئمنگ کے مقابلے ہوئے لیکن ان مقابلوں میں شائقین کی عدم دلچسپی اور خالی نشستوں نے منتظمین کو پریشان کردیا۔ منتظمین اس بات کی تحقیقات کر رہے ہیں کہ سوئمنگ کے مقابلوں کے دوران سیکڑوں کی تعداد میں نشستیں خالی کیوں تھیں، حالانکہ ملکہ برطانیہ خود وہاں موجود تھیں پھر بھی شائقین کی تعداد تسلی بخش نہیں تھی۔ والی بال اور ٹینس ایونٹس میں بھی شائقین کی تعداد توقع کے مطابق نہیں رہی حالانکہ ایونٹس کے تمام ٹکٹ فروخت ہوچکے تھے۔ برطانوی پولیس نے لندن اولمپکس کے ٹکٹوں کی بلیک مارکیٹنگ کی تحقیقات شروع کردیں۔سکاٹ لینڈ یارڈ نے ایک اسٹنگ آپریشن کے ذریعے اولمپکس کی کوریج کرنے والے تین سرکاری ٹکٹ ایجنٹوں کو بے نقاب کیا تھا جو مقررہ قیمت سے دس گناہ زیادہ رقم وصول کررہے تھے۔اولمپک کھیلوں سے متعلق ٹکٹ فراڈ سے نمٹنے کے لئے فورس کی طرف سے قائم کردہ آپریشن پوڈیم کے اہلکاروں نے اخبار کی طرف سے فراہم کی جانے والی بیس گھنٹے سے زائد دورانیہ کی ریکارڈنگ کا جائزہ لینے کے بعد تحقیقات کا آغاز کر دیا ہے۔منتطمین نے فیصلہ کیا ہے کہ ایونٹ کے دوران خالی رہنے والی نشستوں کو بھرنے کے لیے سکول کے بچوں اور ملٹری سٹاف کو خصوصی ٹکٹس جاری کیے جائیں گے۔ منتظمین نے جمناسٹک کے 1ہزار ٹکٹس فروخت کیے اور خالی نشستوں پر فوجیوں کو بیٹھنے کی اجازت دے دی۔

مزید : کھیل اور کھلاڑی


loading...