مردوں اور خواتین کے دماغوں میں فرق سائنس نے بتادیا

مردوں اور خواتین کے دماغوں میں فرق سائنس نے بتادیا
مردوں اور خواتین کے دماغوں میں فرق سائنس نے بتادیا

  

نیویارک (نیوز ڈیسک) عورتوں اور مردوں کی دماغی صلاحیت مختلف یا یکساں ہونے کی بحث صدیوں پرانی ہے اور عموماً یہ سمجھا جاتا ہے کہ مرد عقل و دانش میں عورتوں پر فضیلت رکھتے ہیں۔ سائنس کی ایک تازہ اور جامع تحقیق نے ثابت کیا ہے کہ مردوں اور عورتوں کی دماغی صلاحیت یا ذہانت ایک دوسرے سے کم زیادہ نہیں ہوتی بلکہ مختلف ہوتی ہے، یعنی کچھ کاموں کیلئے عورتیں بہتر دماغی صلاحیت رکھتی ہیں جبکہ کچھ دوسرے کاموں میں مردوں کی دماغی صلاحیت بہتر ہوتی ہے۔ اس تحقیق میں 13 ممالک کے 31000 سے زائد لوگوں پر تحقیق کی گئی۔ سائنسی جریدے ”پرسیڈنگز آف نیشنل اکیڈی آف سائنسز“ میں شائع ہونے والی اس تحقیق کے نتائج کے مطابق مردوں میں ہندسی مسائل جیسا کہ ریاضی اور حساب کتاب کی صلاحیت عورتوں کی نسبت زیادہ ہوتی ہے۔ اس تحقیق میں تین طرح کے ٹیسٹ استعمال کئے گئے، مسائل ہندسہ کو جانچنے کیلئے کچھ اعداد کی جمع تفریق اور تقسیم وغیرہ کرنے کو کہا گیا، یادداشت کیلئے دس الفاظ کو یاد کرنے کیلئے کہا گیا جبکہ تیسرے ٹیسٹ میں ایک منٹ کے دوران زیادہ سے زیادہ شہروں کے نام بتانے کو کہا گیا۔ تاہم مزید تحقیقات سے معلوم ہوا کہ دماغی صلاحیت کا فرق بڑی حد تک جسمانی فرق کی وجہ سے پیدا ہوتا ہے اور عورتوں کو بہتر تعلیم اور صحت کی سہولیات ملنے پر ان کی مجموعی دماغی صلاحیت مردوں سے زیادہ ہوجاتی ہے۔

مزید :

تفریح -