قومی ادارہ صحت کے طبی و لیبارٹری ماہرین کی چھٹیاں منسوخ

قومی ادارہ صحت کے طبی و لیبارٹری ماہرین کی چھٹیاں منسوخ

اسلام آباد (پ ر) وزیر مملکت برائے نیشنل ہیلتھ سروسز ریگولیشنز اینڈ کوآرڈینشن سائرہ افضل تارڑ نے بہاولپور میں کانگو وائرس کی بیماری کی اطلاعات کے بعد پنجاب حکومت کو ہر ممکن حد تک معاونت کی فراہمی کی ہدایات جاری کی ہیں اور قومی ادارہ صحت کے طبی اور لیبارٹری ماہرین کی ہفتہ دار چھٹیاں منسوخ کر دی ہیں ۔ وزیر مملکت نے نیشنل انسٹی ٹیوٹ آف ہیلتھ اسلام آباد کے انچارج کو ہدایت کی ہے کہ وہ کانگو وائرس بارے لیبارٹری رپورٹس کے سلسلہ میں پنجاب حکومت سے رابطہ میں رہیں اور رپورٹس کی فراہمی بر وقت فراہمی کی جائے ۔ وزیر مملکت برائے قومی صحت نے وباؤں کی روک تھام بارے وفاقی ٹیم کو ہائی الرٹ رہنے اور پنجاب حکومت کو درکار فوری معاونت کی فراہمی کرنے کے احکامات بھی جاری کئے ہیں واضح رہے کہ بہاولپور وکٹویہ ہسپتال میں ڈاکٹر صغیرسمیگا کو 25جولائی کو بخار ، گلا دکھنے او اسہال جیسی علامات پر داخل کیا گیا تھا تاہم ان کی ڈینگی رپورٹس منفی آئیں جس پر انہیں آغا خان یونیورسٹی ہسپتال منتقل کیا گیا جہاں ان کا 30جولائی کو انتقال ہو گیا۔ بعدازاں اطلاعات ملیں کہ انہیں لودھراں کی نرس سٹوڈنٹ کا آپریشن کرنے کے دوران کانگو وائرس لگا ہوگا کیونکہ اس نرس سٹوڈنٹ نادیہ حنا میں اپنے رشتہ داروں کے ہاں موجود لائیوسٹاک کے باعث کانگو وائرس کی بیماری جیسی علامات منتقل ہوئی تھیں بعد ازاں ڈاکٹرصغیر کی معاونت کرنے والے ڈاکٹر اویس میں بھی بیماری کی علامات ظاہر ہو گئیں ۔ قومی ادارہ صحت کو ان مریضوں کے بھیجے گئے نمونہ جات کی روشنی میں لودھراں میں نرس کے قریبی تیمار داروں ، اہل خانہ اور دیگر عملہ کے نمونے لے کر ان کو طبی ماہرین کی نگرانی میں رکھا گیا ہے ۔

چھٹیاں منسوخ

مزید : کراچی صفحہ اول


loading...