راولپندی، آرمی ایوی ایشن کا طیارہ گرنے سے شہید ہونے والوں کی تعداد 18ہو گئی 

    راولپندی، آرمی ایوی ایشن کا طیارہ گرنے سے شہید ہونے والوں کی تعداد 18ہو ...

راولپنڈی(سٹاف رپورٹر،مانیٹرنگ ڈیسک،آئی این پی)  راولپنڈی  کے علاقے موہڑہ کالو کے قریب پیر کی رات آرمی ایوی ایشن کے آبادی پر گر کر تباہ ہونے  طیارے کے حادثے میں جاں بحق ہونے والوں کی تعداد18ہو گئی جبکہ16زخمی ہوگئے،پاک آرمی کی نگرانی میں ریسکیو آپریشن مکمل کر لیا گیا،صدر مملکت عارف علوی، وزیر اعظم عمران خان  اور وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی سمیت دیگر سیاسی رہنماوں  نے طیارہ حادثے میں قیمتی جانوں کے ضیاع پر دکھ کا اظہار کرتے ہوئے غمزدہ خاندانوں سے تعزیت کا اظہار کیا۔    راولپنڈی کے علاقے موہڑہ کالو کے قریبپاک آرمی کا تربیتی طیارہ آبادی پر گر گیا جس سے 3 مکانوں کو آگ لگ گئی، حادثے کے نتیجے میں 2 پائلٹس اور عملے کے 3 ارکان سمیت 18 افراد جاں بحق اور 16 زخمی ہوئے جنہیں فوری طبی امداد کے لیے قریبی اسپتال منتقل کردیا گیا۔طیارہ رہائشی علاقے کے قریب گرا جس سے قریبی گھروں میں آگ لگ گئی، حادثے کی اطلاع ملنے پر ریسکیو ٹیموں نے جائے حادثہ پر پہنچ کر آگ پر قابو پایا اور ملبے تلے افراد کو نکالا۔ڈسٹرکٹ ایمرجنسی افسر راولپنڈی عبدالرحمن نے بتایا کہ ملبے تلے دبے تمام افراد کو طبی امداد کے لیے اسپتال منتقل کردیا گیا ہے جب کہ حادثے کے بعد راولپنڈی کے تینوں بڑیہسپتالوں میں ایمرجنسی نافذ کردی گئی ہے۔پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ  (آئی ایس پی آر) کے مطابق آرمی ایوی ایشن کا طیارہ کریش لینڈنگ کے دوران گر کر تباہ ہوا جس میں سوار 2 پائلٹس اور عملے کے 3 ارکان شہید ہو گئے جن میں لیفٹننٹ کرنل ثاقب اور وسیم، نائب صوبیدار افضل، حوالدار ابن امین اور رحمت شامل ہیں۔ تربیتی طیارہ راولپنڈی اور اسلام آباد کے درمیانی علاقے روات کے قریب گاوں میں گرا، طیارے کے گرتے ہی زوردار دھماکہ ہوا اور آگ لگ گئی۔ جلتا ہوا ملبہ آبادی پر گرنے کے سبب 3 مکان مکمل طور پر منہدم ہو گئے جن میں موجود 13 افراد جاں بحق اور 16 زخمی ہو گئے، جاں بحق ہونے والوں میں 3 بچے بھی شامل ہیں۔ ریسکیو عملے نے موقع پر پہنچ کر آگ بجھانے کی کارروائی شروع کر دی اور متاثرہ گھروں سے لاشیں نکالیں جبکہ زخمیوں کو ہولی ہسپتال راولپنڈی منتقل کر دیا گیا۔ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسر ڈاکٹر عبدالرحمان نے طیارہ حادثے میں 18 افراد کے جاں بحق ہونے کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ مرنے والوں کی تعداد بڑھ بھی ہو سکتی ہے۔ انہوں نے بتایا کہ طیارہ آبادی کے جن گھروں پر گرا وہاں لگنے والی آگ پر قابو پا لیا گیا اور کولنگ کا عمل جاری ہے، علاقے کی بجلی منقطع کردی گئی ہے جب کہ لاشوں اور زخمیوں کو اسپتال منتقل کردیا گیا ہے۔ ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسر کے مطابق کئی افراد گھروں کے ملبے تلے پھنس گئے جنہیں پاک فوج کے جوانوں نے نکال کر ریسکیو آپریشن مکمل کیا۔ کورکمانڈر لیفٹننٹ جنرل بلال اکبر نے جائے حادثہ کا دورہ کیا جہاں انھیں طیارہ کریش ہونے سے متعلق بریفنگ دی گئی۔۔ ریسکیو ذرائع کے مطابق طیارے حادثے میں جاں بحق ہونے والے شہریوں میں جمیل، روبینہ، ذوہیب، پری، فاطمہ، عظمی، بشیر، عبدالحفیظ، راحیلہ، فیضان، فائزہ، عبدالروف اور آمنہ بی بی شامل ہیں۔عینی شاہدین  کے مطابق  رات تقریبا 2 بجے کا وقت تھا کہ جہاز کی بالکل مختلف آواز سنی، نیچے آکر دیکھا تو جہاز گرنے کے بعد شعلے بلند ہو رہے تھے۔صدر مملکت عارف علوی نے طیارہ حادثے میں قیمتی جانوں کے ضیاع پر دکھ کا اظہار کرتے ہوئے غمزدہ خاندانوں سے تعزیت کا اظہار کیا ہے۔وزیراعظم عمران خان نے حادثے میں قیمتی انسانی جانوں کے ضیاع پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے زخمیوں کی جلد صحت یابی کے لیے دعا کی ہے۔وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ طیارہ حادثے میں قیمتی جانوں کے ضیاع پر بہت افسوس ہے، پوری قوم صدمے میں ہے اہل خانہ سے تعزیت کرتا ہوں۔وفاقی وزیرامور کشمیرعلی امین گنڈاپور نے راولپنڈی طیارہ حادثے میں انسانی جانوں کے ضیاع پر افسوس کا اظہار کیا ہے۔چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی نے طیارہ حادثے میں انسانی جانوں کے ضیاع پر اظہارافسوس کرتے ہوئے متاثرہ خاندانوں سے دلی ہمدردی کا اظہار کیا۔وفاقی وزیر ہوا بازی غلام سرورخان نے راولپنڈی میں طیارہ حادثے پر اظہارافسوس کرتے ہوئے کہا کہ پاک فوج کے تربیتی طیارے کو حادثے پر دکھ ہے۔پاکستان مسلم لیگ (ن)کے صدر اور قائد حزب اختلاف شہباز شریف  نے راولپنڈی میں پاک فضائیہ کے تربیتی طیارے کے حادثے میں 18 افراد کے جاں بحق ہونے پر اظہار افسوس کرتے ہوئے پاک فضائیہ کے پائلٹس، عملے کے ارکان اور جاں بحق ہونے والے شہریوں کے اہل خانہ سے ہمدردی کا اظہار کیا  اور دعا  کی کہ  اللہ تعالی جاں بحق ہونے والوں کے درجات بلند فرمائے اور اہل خانہ کو صبر جمیل دے۔دریں اثناتربیتی طیارہ حادثے میں شہید پائلٹس اور عملے کی نماز جنازہ چکلالہ گیریژن میں ادا‘ آرمی چیف‘ پاک فوج کے حاضر سروس و ریٹائرڈ افسران اور شہداء کے اہلخانہ نے شرکت کی۔۔ نماز جنازہ میں آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے شرکت کی۔ شہداء کی نماز جنازہ میں اہلخانہ‘ عسکری حکام نے بھی شرکت کی۔ 

طیارہ حادثہ

مزید : صفحہ اول


loading...