پاکستان میں 22 ہزار سے زائد سرکاری افسرون کا دہری شہریت رکھنے کا انکشاف

پاکستان میں 22 ہزار سے زائد سرکاری افسرون کا دہری شہریت رکھنے کا انکشاف

فیصل آباد(سپیشل رپورٹر)پاکستان میں دہری شہریت کے حامل مرد و خواتین سرکاری افسران کی تعداد 22 ہزار 380 ہے،1100 کا تعلق صرف محکمہ پولیس میں سے540 کینیڈین،240برطانوی اور 190 کے قریب امریکی شہریت رکھتے ہیں جبکہ درجنوں سرکاری ملازمین نے آسٹریلیا، نیوزی لینڈ، ملائیشیا اورآئرلینڈ جیسے ملکوں کی بھی شہریت لے رکھی ہے جن میں گریڈ 22 کے 6، ایم پی ون سکیل کے 11، گریڈ 21 کے 40، گریڈ 20 کے 90، گریڈ 19 کے 160، گریڈ 18کے 220 اور گریڈ 17کے کم  160 افسران ہیں اسی طرح داخلہ ڈویژن کے 20، پاور ڈویژن 44، ایوی ایشن ڈویژن 92، خزانہ ڈویژن 64، پٹرولیم  ڈویژن96، کامرس ڈویژن 10،آمدن ڈویژن 26، اطلاعات و نشریات 25، اسٹیبلشمنٹ 22، نیشنل فوڈ سکیورٹی 7، کیپٹل ایڈمنسٹریشن11،مواصلات ڈویژن16، ریلوے ڈویژن 8، کیبنٹ ڈویژن کے 6 افسر دہری شہریت کے حامل ہیں۔ محکمہ تعلیم  140 سے زیادہ افراد بھی دہری شہریت رکھتے ہیں۔ قومی ایئر لائن کے 80 سے زیادہ، لوکل گورنمنٹ 55،  سپیشلائزڈ ہیلتھ کیئر 55،نیشنل بینک 30، سائنس اور ٹیکنالوجی 60،ز راعت 40سے زیادہ، سکیورٹی اینڈ ایکسچینج کمیشن 20، آبپاشی 20، سوئی سدرن 30، سوئی ناردرن 20، پی ایم ایس 17، پاکستان ایڈمنسٹریٹو سروس 14،نادرا کے 15ملازمین بھی دہری شہریت کے حامل ہیں۔

 دہری شہریت/ انکشاف

مزید : صفحہ اول


loading...