متاثرین بارش کی مالی امدادکیلئے ہنگامی اقدامات کئے جائیں،محمد حسین محنتی

متاثرین بارش کی مالی امدادکیلئے ہنگامی اقدامات کئے جائیں،محمد حسین محنتی

کراچی(اسٹاف رپورٹر)جماعت اسلامی سندھ کے امیر محمد حسین محنتی نے کراچی حیدرآباد ٹھٹہ سمیت سندھ بھر کے مختلف شہروں میں ہونے والی بارشوں کے نتیجے میں املاک کے نقصان اور کرنٹ لگنے سے قیمتی انسانی جانوں کے ضیاع پر دلی دکھ و افسوس کا اظہار کرتے ہوئے زور دیا ہے کہ متاثرین کی مالی امداد آب نکاسی کے ہنگامی اقدامات کئے جائیں۔ انہوں نے آج ایک بیان میں کہاکہ بارش اللہ کی رحمت ہوتی ہے مگر حکمرانوں و انتظامیہ کی سستی و نااہلی کی وجہ سے یہ انسانوں کے لیے مصیبت بن جاتی ہے۔ تھوڑی سے بارش اورحکومتی ناقص انتظامات کی وجہ سے کراچی حیدرآباد سمیت سندھ کے کئی شہر ندی نالوں کا منظر پیش کر رہے ہیں۔گلی محلوں میں کھڑے پانی کی وجہ سے معمول کی زندگی مفلوج بن چکی ہے۔کئی دن پیش گی اطلاعات کے باوجود حفاظتی انتظامات نہ کرنا بی حسی کی انتہا ہے، کراچی میں سٹی حکومت، کے الیکٹرک اور صوبائی انتظامیہ کی نااہلی اور بدانتظامی کی وجہ سے باران رحمت عوام کیلئے زحمت بن گئی ہے، کے الیکٹرک نے بارش کی پہلی بوند کے بعد کراچی میں بجلی کی غیراعلانیہ بندش کردی جس کی وجہ سے عوام دہرے عذاب کا شکار ہوگئے ہیں جبکہ اندرون سندھ میں بھی 18سے20گھنٹے بجلی کی لوڈشیڈنگ اور کئی علاقوں میں دو دو دن سے بجلی غائب ہے جسکی وجہ سے پینے کا پانی بھی ناپید ہوچکا ہے جبکہ صوبائی حکومت اور سٹی ناظم کی سیاسی رسہ کشی میں عوام کو بے یار ومددگار چھوڑنا عوامی مسائل سے عدم دلچپی کا منہ بولتا ثبوت ہے۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ متاثرین بارش کو فوری طور پر رلیف فراہم کرنے کیلئے مؤثر اقدامات کئے جائیں، کرنٹ لگنے،آسمانی بجلی اور دیگر حادثات کی وجہ سے ہلاک ہونے والوں کے لواحقین کیلئے امداد کا اعلان اور زخمیوں کا سرکاری خرچ پر علاج ممکن بنایا جائے، رہائشی اور بازاروں میں بارش کے پانی کو نکالنے کیلئے ہنگامی طور پر اقدامات کرکے عوام کو دہرے عذاب سے نجات دلائی جائے۔انہوں نے جماعت اسلامی اور الخدمت کے رضاکاروں کو متاثرین بارش کی داد رسی اور فوری امداد کیلئے بھی ہدایات جاری کردیں،راشن، کپڑوں اور خیموں کا فوری بندوبست کرکے بارش کے متاثرین کو ریلیف فراہم کیا جائے۔

مزید : صفحہ اول


loading...