نیول چیف کی زیر صدارت بحریہ یونیورسٹی کے بورڈ آف گورنرزکا اجلاس

نیول چیف کی زیر صدارت بحریہ یونیورسٹی کے بورڈ آف گورنرزکا اجلاس

کراچی(اسٹاف رپورٹر)چیف آف نیول سٹاف ایڈمرل ظفر محمود عباسی نشان امتیاز (ملٹری)نے بحریہ یونیورسٹی ہیڈ آفس میں منعقدہ بحریہ یونیورسٹی کے بورڈ آف گورنرز کے41 ویں اجلاس کی سربراہی کی۔ اس موقع پر بورڈ کو یونیورسٹی کے مختلف جاری منصوبوں کے بارے میں تفصیلات فراہم کی گئیں اور انہیں مختلف تعلیمی شعبوںمیں ترقی اور تنوع، انفراسٹرکچر میں توسیع، بجٹ اور نصابی و غیر نصابی شعبوں میںکئے جانے والے اہم اقدامات سے آگاہ کیا گیا۔ نیول چیف جوکہ یونیورسٹی کے پرو چانسلر اور بورڈ آف گورنرز کے چیئرمین بھی ہیں نے ان کوششوں کو سراہا جن کا مقصد تعلیم و تدریس کے ساتھ ساتھ ایمانداری، تخلیقی صلاحیتوں اور قابلیت میں بہتری کی جستجو جیسی اقدار کے ذریعے طلباءکی شخصیت سازی ہے۔ انہوں نے اس بات کو بھی سراہا کہ یونیورسٹی کے وژن اور مشن کو مدنظر رکھتے ہوئے تعلیمی و تدریسی میعار کو بھی بڑھایا جارہا ہے۔ اس کی مثال میری ٹائم ریسرچ اینڈ سٹڈیزپروگرام کا تعارف ہے۔ بحریہ یونیورسٹی کو فخر حاصل ہے کہ یہ پاکستان میں پہلی میری ٹائم یونیورسٹی ہے جس کا مقصد ملک کی سمندری معیشت (بلیو اکانومی) کے فروغ میں اپنا کردار ادا کرنا ہے۔ بورڈ آف گورنرز کے اجلاس میں بورڈ کے اراکین بشمول نیول آفیسرز، سیکریٹری وزارت سائنس اینڈ ٹیکنالوجی، وزارت مالیات کے اقتصادی مشیر برائے پلاننگ، بحریہ یونیورسٹی کے ریکٹر اور مینجمنٹ کے دیگر اعلیٰ عہدیداران نے شرکت کی۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر


loading...