شیطان صفت ٹیچر نے اپنی ہی 6 سالہ بیٹی کو فحش فلم دکھانا شروع کردی اور پھر ۔۔۔ دل دہلا دینے والی خبر آگئی

شیطان صفت ٹیچر نے اپنی ہی 6 سالہ بیٹی کو فحش فلم دکھانا شروع کردی اور پھر ۔۔۔ ...
شیطان صفت ٹیچر نے اپنی ہی 6 سالہ بیٹی کو فحش فلم دکھانا شروع کردی اور پھر ۔۔۔ دل دہلا دینے والی خبر آگئی

  


جے پور (ڈیلی پاکستان آن لائن) بھارتی ریاست راجستھان میں ایک شیطان صفت سکول ٹیچر نے کئی سال تک اپنی ہی کمسن بیٹی کو فحش فلمیں دکھا کر اس کا جنسی استحصال کیا ہے۔

ضلع سری گنگا نگر کے علاقے سورت گڑھ میں ایک سرکاری سکول ٹیچر پر اس کی اپنی ہی بیٹی نے جنسی استحصال کا الزام عائد کیا ہے۔ 10 ویں جماعت کی طالبہ نے الزام عائد کیا ہے کہ جب وہ 6 برس کی تھی اس وقت سے اس کا باپ اس کا جنسی استحصال کر رہا ہے۔

متاثرہ کے مطابق پہلے تو وہ اپنے والد کی غلیظ سوچ کو سمجھ نہیں پائی پھر وہ کچھ سالوں کیلئے اپنی نانی کے گھر چلی گئی۔ اپنی نانی کے گھرسے واپس آئی تو اس کے باپ نے ایک بار پھر وہی سلسلہ شروع کردیا۔ کمسن لڑکی پہلے تو اسے اپنے باپ کا پیار ہی سمجھتی رہی لیکن جب اسے سمجھ آئی تو اس نے اس فعل کی مخالفت کی جس پر اس کے باپ نے اسے ڈرانا اور مارنا شروع کردیا۔

پولیس کے مطابق متاثرہ لڑکی نے اس دوران ڈائری بھی لکھی۔ لڑکی نے تین سال تک ڈائری لکھی جس میں اپنے ہی سگے باپ کے کالے کرتوتوں کا بھی تذکرہ کیا گیا ہے۔ پولیس کا کہنا ہے کہ درندہ صفت سکول ٹیچر اپنی بیٹی کو فحش فلمیں دکھا کر اس کا استحصال کرتا تھا۔

مزید : جرم و انصاف


loading...