ایل ڈی اے کا 58ارب 61کروڑ روپے کا بجٹ منظور: ترقیاتی کاموں کیلئے 32ارب سے زائد رقم مختص

  ایل ڈی اے کا 58ارب 61کروڑ روپے کا بجٹ منظور: ترقیاتی کاموں کیلئے 32ارب سے زائد ...

  

لاہور(جنرل رپورٹر،اپنے نمائندے سے) لاہور ڈویلپمنٹ اتھارٹی کی گورننگ باڈی نے سال 2020-21کے لئے ایل ڈی اے (اربن ڈویلپمنٹ ونگ)‘ واسا اور ٹیپا کے بجٹ کی منظوری دے دی ہے۔ایل ڈ ی اے اور اس کی ذیلی ایجنسیوں کو نئے مالی سال کے دوران مجموعی طور پر58ارب 61کروڑ روپے سے زیادہ وسائل دستیاب ہوں گے۔ کل اخراجات کا تخمینہ 53ارب 12کروڑ روپے ہے جبکہ ترقیاتی کاموں پر 32ارب 45کروڑ روپے سے زیادہ خرچ کئے جائیں گے۔ گورننگ باڈی کا اجلاس ایل ڈی اے کے وائس چیئرمین ایس ایم عمران کی زیر صدارت ہواجس میں رکن صوبائی اسمبلی سعدیہ سہیل رانا‘قصور سے ملک مختار احمد اور ننکانہ صاحب سے محمد عاطف کے علاوہ وائس چیئرمین واسا امتیاز محمود‘ میجر ریٹائرڈ سید برہان علی، انجینئر عامر ریاض قریشی‘ڈائریکٹر جنرل ایل ڈی اے احمد عزیر تارڑ‘منیجنگ ڈائریکٹرواسا سید زاہد عزیز اورمحکمہ پی اینڈ ڈی، ہاو ¿سنگ، بلدیات‘ فنانس اور کمشنر لاہور کے نمائندوں نے شرکت کی۔ ایل ڈی اے اربن ڈویلپمنٹ ونگ کو مالی سال 2020-21 کے دوران مجموعی طور پر 39 ارب 52 کروڑروپے کے وسائل دستیاب ہوں گے جن میں 25 ارب 87کروڑ روپے ترقیاتی کاموں پر خرچ کئے جائیں گے - ان ترقیا تی اخراجات میں (i) ایل ڈی اے کے اپنے وسائل سے حاصل ہونے والے 17 ارب 52کروڑ76لاکھ روپے او ر (ii)حکومت پنجاب کی طرف سے ادائیگی‘ سالانہ ترقیاتی پروگرام اور ڈیپازٹ ورکس کے تحت لاہور میں مختلف منصوبوں پر عمل درآمد کے لئے خرچ کئے جا نے والے8 ارب روپے34کروڑ2لاکھ روپے شامل ہیں -ایل ڈی اے کے اپنے وسائل سے اس کی رہائشی سکیموں میں ترقیاتی کاموں پر کل 8 ارب74کروڑروپے خرچ کئے جائیں گے۔

جن میں 40کروڑروپے ایل ڈی اے ایونیو ون‘ 3کروڑ 50لاکھ روپے فنانس اینڈ ٹریڈ سنٹر جوہر ٹا?ن میں سڑکوں کی تعمیر اور واٹر سپلائی اورسیوریج کے منصوبوں‘آٹھ ارب16کروڑ روپے نئی رہائشی سکیم ایل ڈی اے سٹی جبکہ9کروڑ روپے ایل ڈی اے کی مختلف رہائشی سکیموں میں ترقیاتی منصوبوں کے لئے مختص کئے گئے ہیں -

نئے بجٹ میں مختلف عمارتوں کی تعمیر کے لئے مجموعی طو ر پرتین ارب 43کروڑ18لاکھ روپے مختص کئے گئے ہیں جن میں ایل ڈی ا ے سٹی میں سرکاری ملازمین کے لئے اپارٹمنٹس کی تعمیر کے منصوبے کی خاطردوارب روپے مختص کئے گئے ہیں۔اسی طر ح شیخوپورہ‘ننکانہ اورقصور میں بھی اپارٹمنٹس کی تعمیر کے لئے ایک ارب روپے رکھے گئے ہیں۔ پارک اینڈ شاپ پلازہ مون مارکیٹ علامہ اقبال ٹا?ن میں اضافی تعمیرات پر خرچ کے لئے 5کروڑ روپے شامل ہیں۔فنانس اینڈ ٹریڈ سنٹر میں اپارٹمنٹس کی تعمیر پر 10کروڑ روپے‘ایل ڈی اے ملازمین کے لئے رہائش کی تعمیر پر خرچ کے لئے10کروڑ روپے شامل ہیں۔

دیگر ترقیاتی سکیموں پرتین ارب روپے سے زائد خرچ کئے جائیں گے -ان میں لاہور کے ماسٹر پلان کی تیاری کے لئے 50کروڑ روپے‘گرین کور کے نام سے لاہور میں سبزہ کاری کے لئے 15کروڑ روپے‘ایل ڈی اے کے لئے انٹیگریٹڈ کمپیوٹرائزڈ سسٹم پر13 کروڑ62لاکھ روپے‘ شہر میں مختلف مقامات پر پیدل سڑک پار کرنے والو ں کے لئے پل تعمیرکرنے کے لئے 10کروڑ روپے‘پہلے سے جاری ترجیحی کاموں پر خر چ کے لئے 31کروڑ روپے اورایریا ڈویلپمنٹ پروگرام کے لئے ایک ارب 67کروڑ روپے رکھے گئے ہیں۔

ایل ڈی اے کی پہلے سے جاری سکیمیں مکمل کرنے کے لئے دو ارب 11کروڑروپے خرچ کئے جائیں گے-ان میں فردوس مارکیٹ انڈر پاس کی تعمیر کے لئے 97کروڑ روپے‘جوہر ٹا?ن میں انٹرٹینمنٹ پارک قائم کرنے کے لئے 33کروڑ روپے‘جوہر ٹا?ن میں واک اینڈ شاپ ایرینا کی تعمیر پر45کروڑروپے‘سٹرکچر پلان روڈ ز کے غیر تعمیر شدہ حصوں کی تعمیر کے لئے 20 کروڑ روپے‘کینال روڈ پر انڈر پاسز کی ری ماڈلنگ کے لئے ایک کروڑ 70لاکھ روپے مختص کئے گئے ہیں۔

حکومت پنجاب کی طرف سے سالانہ ترقیاتی پروگرام اور ڈیپازٹ ورکس کی ادائیگی کے تحت لاہور میں مختلف ترقیاتی منصوبوں پر8 ارب34کروڑ روپے خرچ کئے جا ئیں گے - ایک موریہ پل نزد ریلوے سٹیشن کے توسیعی منصوبے پر آٹھ کروڑروپے خرچ کئے جائیں گے۔اس کے علاو ہ مختلف مقامات پرزیرتعمیر 11سپورٹس کمپلیکس مکمل کرنے کے لئے13کروڑروپے خرچ کئے جائیں گے۔ لاہوراورنج لائن میٹرو ٹرین منصوبے کے تعمیراتی منصوبے اور دیگر متعلقہ کاموں کے لئے سات

واسا2020-21:واسا کونئے مالی سال کے دوران17ارب98کروڑ36لاکھ روپے کے وسائل دستیاب ہو ں گے- کل اخراجات کا تخمینہ20 ارب81کروڑ روپے لگایا گیا ہے جبکہ فر اہمی و نکاسی آب کے ترقیاتی منصوبوں پر6ارب44کروڑ50لاکھ روپے خرچ کئے جائیں گے۔

ٹیپا2020-21:ٹیپا کو مجموعی طور پرایک ارب 11کروڑ 32لاکھ روپے کے وسائل دستیاب ہوں گے۔ اخراجا ت کا تخمینہ 43کروڑ 84لاکھ روپے ہے۔ ترقیاتی منصوبوں پر خرچ ہونے والی رقم13کروڑ86لاکھ روپے ہے۔

فوٹو کیپشن: لاہور ڈویلپمنٹ اتھارٹی کے وائس چیئرمین ایس ایم عمران گورننگ باڈی کے اجلاس

کی صدارت کر رہے ہیں۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -