سپریم کورٹ میں جمع مشکوک لائسنس والے پائلٹس کی فہرست میں غلطیاں

سپریم کورٹ میں جمع مشکوک لائسنس والے پائلٹس کی فہرست میں غلطیاں

  

اسلام آبد (مانیٹرنگ ڈیسک)سپریم کورٹ میں مشکوک لائسنس والے پائلٹس کی جمع کرائی گئی فہرست میں بھی غلطیاں سامنے آگئی ہیں۔ پائلٹس کے مشکوک لائسنس کے معاملے پرسپریم کورٹ کے ازخود نوٹس کیس میں سول ایوی ایشن اتھارٹی(سی اے اے) کی جانب سے جمع کرائی گئی فہرست میں 15 ایسے پائلٹس ہیں جو کبھی قومی ائیرلائنز (پی آئی اے) کے ملازم ہی نہیں رہے۔ذرائع کے مطابق 20 پائلٹس ایسے ہیں جو یا تو ریٹائرہوگئے یا وفات پاچکے ہیں جب کہ فہرست میں 24 ایسے پائلٹس بھی ہیں جن کے نام اور سی اے اے ریفرنس نمبر ہی غلط ہیں۔ذرائع کا کہنا ہے کہ معطل کیے گئے 262 مشکوک لائسنس کے حامل پائلٹس میں سے 50 پائلٹس کا لائسنس، ڈیوٹی اور امتحان ایک ہی دن دینیکے الزام پر معطل کردیا گیا ہے جب کہ فلائنگ ڈیوٹی اور تحریری امتحان ایک ہی دن دینے پر کوئی پابندی نہیں ہے۔اس کے علاوہ 10 پائلٹس کا معاملہ عدالتوں میں ہے اور 17 کے معاملے میں کمپیوٹر ریکارڈ میں خامیاں سامنے آئی ہیں۔

غلطیاں

مزید :

صفحہ اول -