ڈیپارٹمنٹل کرکٹ کی واپسی کیلئے مطالبات بڑھنے لگے

ڈیپارٹمنٹل کرکٹ کی واپسی کیلئے مطالبات بڑھنے لگے
ڈیپارٹمنٹل کرکٹ کی واپسی کیلئے مطالبات بڑھنے لگے

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) ڈیپارٹمنٹل کرکٹ کی واپسی کیلئے مطالبات بڑھنے لگے ہیں اور رکن قومی اسمبلی اقبال محمد علی نے اس حوالے سے پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کے چیئرمین پی سی بی احسان مانی کو خط بھی لکھ دیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق رکن قومی اسمبلی اقبال محمد علی نے چیئرمین پی سی بی احسان مانی کو خط میں لکھاکہ گزشتہ کئی دہائیوں میں ڈیپارٹمنٹل کرکٹ نے ایک نرسری کا کردار ادا کیا جبکہ اس کی سرگرمیوں کا پی سی بی پر مالی بوجھ بھی نہیں پڑا، ایک طرف حکومت پہلے ہی معاشی بحران کا شکار اور تعلیم یافتہ نوجوانوں کو بھی ملازمتیں دینے کے قابل نہیں، ان حالات میں آپ کے فیصلے نے پاکستان کرکٹ کا مستقبل سمجھے جانے والے ایک ہزار کے قریب نوجوان بے روزگار کر دئیے ہیں۔

انہوں نے خط میں مزید لکھا کہ پی سی بی کے اس اقدام سے کھیل کو بھی ناقابل تلافی نقصان پہنچا، مالی مسائل کی وجہ سے کرکٹرز اپنے کھیل پر توجہ مرکوز نہیں رکھ پائیں گے، میری تجویز ہے کہ ڈپارٹمنٹل کرکٹ بحال کر دی جائے۔ انہوں نے کہا کہ محکمہ جاتی ٹیموں کیلئے گریڈ ٹو طرز کا ٹورنامنٹ متعارف کرایا جائے، اس سے کرکٹرز کی ملازمتیں بچ جائیں گی اور وہ اپنی پوری توجہ کھیل پر مرکوز رکھیں گے، پی سی بی اور پاکستان کرکٹ کا بھی بھلا ہو گا۔

اقبال محمد علی نے موقف اختیار کیاکہ گریڈ ٹو طرز کے ڈیپارٹمنٹل مقابلے کرانے سے نئے سٹرکچر کے تحت بنائی جانے والی6 ایسوسی ایشنز کیلئے بھی کوئی مسائل نہیں ہوں گے، امید ہے کہ پی سی بی اپنے فیصلے پر نظر ثانی کرتے ہوئے محکمہ جاتی کرکٹ بحال کرے گا۔

مزید :

کھیل -