نواز شریف ملک کو جنگ سے نکال لائے ہیں ، کسی لڑائی میں نہیں الجھیں گے،پرویز رشید

نواز شریف ملک کو جنگ سے نکال لائے ہیں ، کسی لڑائی میں نہیں الجھیں گے،پرویز ...

                                    اسلام آباد (اے این این) وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات سینیٹرپرویز رشید نے کہا ہے کہ قوم یقین رکھے پاکستان کسی نئی جنگ میں نہیں الجھے گا، ہم ملک کی پہچان جنگ کے سوداگر کے نام سے نہیں امن کے سفیر کے طورپر بنائیں گے، نواز شریف نے ملک کو جنگ سے نکال کر امن کے سفر پر گامزن کردیا ہے، ہماری حکومت بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام کو سیاسی مقاصد کیلئے استعمال نہیں کرے گی، پرویز مشرف حکومت کی تحویل میں نہیں ان کے مستقبل کا فیصلہ عدالت کرے گی، ٹی 20میچ میں قومی ٹیم کی فتح پر خوشی ہوئی ہے، بنگلہ دیش کے میدانوں میں سبز ہلالی پرچم بلند کرنے کی ضرورت تھی۔ صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ہم نے بینظیر انکم سپورٹ پروگرام کا نام تک نہیں بدلا، اگر کوئی تنقیدکرتا ہے تو اس کی پروا نہیں، ہم نے فنڈ کا درست استعمال کیا ہے اور الیکشن سے پہلے لوگوں میں پیسے نہیں بانٹے مستحق لوگوں کو رقم دی گئی ہے اور لوگ پرامن طریقے سے اپنا حق وصول کررہے ہیں۔ ماضی میں جن چیزوں کو غلط استعمال کیا گیا ہم نے ان کا بھی درست استعمال کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستانی عوام وزیراعظم نواز شریف کے ٹریک ریکارڈ سے آگاہ ہیں وہ جب بھی حکومت میں آئے ہیں معیشت نے ترقی کی ہے ملک کی اقتصادی حالت مضبوط اور روپیہ مستحکم ہوا ہے۔ نواز شریف کے دور میں ہمیشہ پاکستان نے خوشحالی کے سفر کا آغاز کیا ہے، آج بھی حکومتی پالیسیوں کے نتائج سامنے آرہے ہیں اور عالمی اداروں نے تسلیم کیا ہے کہ پاکستان تیز رفتار ترقی کے سفر پر چل پڑا ہے یہ سب کچھ نواز شریف کی امن سے محبت اور جنگ سے نفرت کے باعث ہوا ہے۔ ہمارا زمانہ اس طرح سے یاد رکھا جائے گاکہ دنیا پاکستان کو جنگ کے سوداگر کے نام سے نہیں امن کے سفیر کے طورپر جانے گی۔ نواز شریف نے جنگ کا زمانہ پیچھے چھوڑ کر امن کا زمانہ لائے ہیں کسی کو پاکستان پر الزام یا شک نہیں کرنا چاہیے کہ پاکستان کسی جنگ میں الجھے گا۔ نواز شریف ملک کو جنگوں سے نکال کر لائے ہیں ۔ ایسے شخص کے بارے میں سب کو یقین ہونا چاہیے کہ وہ ملک کو کسی جنگ میں نہیں الجھائیں گے اور امن کے سفر پر آگے بڑھائیں گے۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ سابق صدر پرویز مشرف حکومت کی تحویل میں نہیں ہیں ان کے مستقبل کا فیصلہ عدالت کرے گی، معاملہ عدالت میں ہے میں اس پر تبصرہ نہیں کروں گا۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان اور بنگلہ دیش کا میچ آخری گیند تک دیکھا ہے قومی ٹیم کی فتح پر مجھے خوشی ہوئی ہے اور سر فخر سے بلند ہوا ہے، بنگلہ دیش کے میدانوں میں سبز ہلالی پرچم بلند کرنے کی ضرورت تھی۔

مزید : صفحہ اول


loading...