اسلام کے نفاذ سے ہی ملک میں امن قائم ہوسکتا ہے، عرفان مشہدی

اسلام کے نفاذ سے ہی ملک میں امن قائم ہوسکتا ہے، عرفان مشہدی

 لاہور (سٹاف رپورٹر) مرکزی جماعت اہلسنّت پاکستان کے ناظم اعلیٰ سید عرفان مشہدی موسوی نے کہا ہے کہ پاکستان میں امن و رواداری کےلئے معاشرہ کو فرقہ وارانہ فکر سے آزاد کروانا ہو گا،طالبان کی طرف سے جنگ بندی کے باوجود طاغوت کے ایجنٹوں پر کڑیہ نظر رکھنی ہوگی، تعلیمات نبوی ﷺ پر عمل اور ملک میں اس کے نفاذ سے ہی امن قائم کیا جا سکتا ہے ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز لاہور دفتر میں ہونے والے مرکزی جماعت اہلسنّت پنجاب کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا اجلاس کی صدارت پیرامانت علی شاہ امیر پنجاب نے کی اس موقع پر پنجاب کے ناظم اعلیٰ قاضی عبدالغفارقادری،علامہ فاروق احمد ضیائی،علامہ الطا ف الرحمن،علامہ شبیر انجم،پیر محمد امین ساجد،علامہ محمد حسین عرفانی، اور سید زاہد شاہ سمیت دیگر نے شرکت کی۔

 اس موقع پر آئندہ ماہ ہونے والی ”عزت رسولﷺ “ کانفرنس کے انعقاد کے بارے میں غورو خوض کیا گیا قاضی عبدالغفار قادری نے کہا کہ نبی کریم ﷺ کا دشمنوں سے حسنِ سلوک اور اپنے مخالف کو معاف کرنے کی تعلیم کا کائنات میں ثانی نہیں ملتا۔اسلام امن و سلامتی کا دین ہے جس میں تمام غیر مسلموں کو بھی مکمل حقوق حاصل ہیں ۔من پسند شریعت نافذ کروانے والے راہ راستہ پر آجائیں ۔فروغ محبت اور اصلاح اعمال کےلئے سیرت النبی ﷺ کا فروغ ضروری ہے ۔تعلیماتِ نبوی ﷺ کو ہم اپنی زندگیوں پر نافذ کر کے مقرب بارگاہ خدا وندی بن سکتے ہیں۔

مزید : میٹروپولیٹن 4


loading...