محکمہ قانون کے بعد محکمہ خزانے بھی لاء افسروں کی اپ گریڈ یشن پر اعتراض لگا دیا

محکمہ قانون کے بعد محکمہ خزانے بھی لاء افسروں کی اپ گریڈ یشن پر اعتراض لگا ...

لاہور ( نامہ نگار خصوصی) سیکرٹری محکمہ قانون کے بعد سیکرٹری خزانہ نے حامد یعقوب شیخ نے لاء افسروں کی اپ گریڈیشن پر اعتراض عائد کر دیا ، معلوم ہوا ہے کہ وزیر اعلیٰ پنجاب میاں شہباز شریف کی رضامندی کے بعد ایڈووکیٹ جنرل شکیل الرحمان نے پانچ اسسٹنٹ ایڈووکیٹ جنرلز کی بطور ایڈیشنل ایڈووکیٹ جنرل اپ گریڈیشن کی سمری محکمہ قانون پنجاب کو بھجوائی تھی جس پر پہلے تو سیکرٹری محکمہ قانون ابوالحسن نجمی نے اعتراض لگایا تاہم ایڈووکیٹ جنرل کی معاونت کے بعد اعتراضات دور کر کے پانچوں لاء افسروں کی اپ گریڈیشن کی سمری سیکرٹری محکمہ خزانہ حامد یعقوب شیخ کو بھجوائی جس پر انہوں نے اعتراض عائد کر دیا ہے کہ لاء افسروں کی اپ گریڈیشن کا قانونی جواز موجود نہیں ہے، ایڈووکیٹ جنرل آفس کے ذرائع کے مطابق بیورو کریسی کی طرف سے اپ گریڈیشن اور تنخواہوں کے معاملے پر بار بار رکاوٹیں پیدا کرنے کے بعد لاء افسر مستعفی ہونے پر غور کر رہے ہیں، جن اسسٹنٹ ایڈووکیٹس جنرل کی اپ گریڈیشن کی سمری بھجوائی گئی ہے ان میں اسسٹنٹ ایڈووکیٹ جنرل خالد وحید، انوار حسین بیرسٹر قاسم چوہان، احمد حسن اور سمیعہ خالد شامل ہیں۔

لاء افسران

مزید : علاقائی