اسلام دشمن قوتوں کی سازشیں کامیاب نہیں ہوں گی،علماء کرام

اسلام دشمن قوتوں کی سازشیں کامیاب نہیں ہوں گی،علماء کرام

اٹک(نمائندہ پاکستان)تحفظ نامو س رسالت دینی مدارس اور شعائر اسلام کے لیے ہمہ تن کوشاں ہیں اسلام دشمن قوتوں کی سازشیں کامیاب نہیں ہوں گی جمعیت علمائے اسلام کا جب تک اس ملک میں ایک بھی کارکن زندہ ہے حضور ﷺ کی ناموس پر آنچ نہیں آنے دے گا کسی بھی حکومتی سطح پر ناموس رسالت قانون میں تبدیلی کی کوئی بھی جرأت نہیں کر سکتا تحفظ ناموس رسالت ہو ، حقو ق نسواں بل ہو سندھ اسمبلی میں نابالغ کا قبول اسلام کا معاملہ ہو یا پنجاب اسمبلی میں خواتین بل ہو جمعیت علمائے اسلام نے ہراول دستے کا کردار ادا کیا ہے آج وطن عزیز میں ملک و ملت آزاد اور بہن بیٹیوں کی جو عزت محفوظ ہے اس کے پیچھے جمعیت علمائے اسلام کی جدو جہد اور سیاسی کردار کار فرما ہے اسلام اور مسلمانوں کے خلاف ہر سازش کا مقابلہ جے یو آئی کر رہی ہے اپریل میں پشاور میں ہونے والی صد سالہ عالمی اجتماع میں ملک اور بیرون ملک سے بیس لاکھ سے زائد افرادکی شرکت سیکولر ازم کا پرچار کرنے والوں کے لیے نوشتہ دیوار ہو گا ان خیالات کاا ظہار مرکزی رہنما جے یو آئی سینٹر مولانا عطاء الرحمن ،صوبائی سیکرٹری اطلاعات مولانا عبدالجلیل جان ، ضلعی امیر مولانا شیر زمان ، سرپرست قاضی خالد محمود، مفتی سید امیر زمان حقانی، مولانا محمد نعیم ، مفتی محمد عبداللہ، مولانا شہاب الدین، مولانا محمد جان، قاری عبدالرؤف، قاسم خان وردگ، مفتی سعید الرحمن، مولانا عبدالطیف نے جامع مسجد لوہاراں اٹک شہر میں علماء کنونشن سے خطاب میں کیا اس موقع پر کنونشن میں جمعیت علمائے اسلام ضلع اٹک کی جنرل کونسل کے ڈیڑھ سو سے زائد علمائے کرام نے شرکت کی جبکہ علماء کی اکثریت شریک ہوئی مولانا عطاء الرحمن نے کہا کہ جمعیت کا مشن وہی ہے جو حضورﷺ لے کر آئے اللہ کی زمین پر اللہ کا نظام اس مشن کے لیے ڈیڑھ سو سال قبل دارالعلوم دیو بند کی بنیاد رکھی گئی اور سو سال پہلے بر صغیر پاک و ہند میں جمعیت علمائے اسلام کا قیام عمل میں لایا گیا جے یو آئی قرآن و سنت کی ترویج اور اسلامی نظام کے نفاذ کے لیے پر امن اور جمہوری جدوجہد کر رہی ہے پارلیمنٹ کے اندر اور پارلیمنٹ کے باہر ہر سطح پر ہمیشہ اپنا کردار ادا کیا ہے اور اسمبلی کے اندر آج تک کوئی بھی غیر اسلامی بل اور اسلامی شعائر کے خلاف لائے جانے والے کسی بھی بل پر نہ صرف شدید احتجاج کیا بلکہ ہمیشہ حکومتوں کو پسپائی اُٹھانا پڑی پیپلز پارٹی کے دور میں جب ناموس رسالت قانون میں ترمیم کی کوشش کی گئی تو کراچی سے خیبر تک مذہبی جماعتوں کے ساتھ مل کر تحریک چلائی اور پارلیمنٹ کے اندر آواز بلند کرتے ہو ئے واضح کیا کہ ایسے کسی بھی ترمیم کی اجاز ت نہیں دی جائے گی ہمارا مشن اور مقصد ناموس رسالت ، دینی مدارس، شعائر اسلام کا تحفظ ہے صد سالہ عالمی اجتماع ملک بھر میں نوجوان نسل کو دین سے ہم آہنگ کرنے اور اُن کے رُخ بے حیائی فحاشی سے موڑ کر قرآن و سنت کی طرف کرنے کے لیے یہ اجتماع سنگ میل ثابت ہو گا 8اپریل کو خطبہ جمعہ اما م حرم الشیخ عبدالسدیس دیں گے میں اٹک کے لوگوں کے پاس دعوت لے کر آیا ہوں کہ اس اجتماع میں شریک ہو ں۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر