مودی حکومت کی مسلم دشمنی ، گائے ذبح کرنے پر عمر قید ، گوشت بیچنے پر10سال قید،1لاکھ سے5لاکھ روپے جرمانے کی سزا کا قانون منظور کر لیا گیا

مودی حکومت کی مسلم دشمنی ، گائے ذبح کرنے پر عمر قید ، گوشت بیچنے پر10سال ...
مودی حکومت کی مسلم دشمنی ، گائے ذبح کرنے پر عمر قید ، گوشت بیچنے پر10سال قید،1لاکھ سے5لاکھ روپے جرمانے کی سزا کا قانون منظور کر لیا گیا

  

احمد آباد  (ڈیلی پاکستان آن لائن) نریندر مودی کی مسلم دشمن پالیسیاں عروج پر ہیں۔ گجرات میں گائے ذبح کرنے پر عمر قید، گوشت بیچنے پر10سال قید اور 1لاکھ روپے جرمانے کا قانون منظور کر لیا گیا ہے۔

پاک بحریہ کی جانب سے1خاتون افسر سمیت10کموڈورز کو ستارہ امتیاز، 15افسران کوتمغہ امتیاز ، 1افسر اور4جوانوں کو تمغہ بسالت سے نواز ا گیا

گجرات کے وزیرِ مملکت پردیپ سنگھ جڈیجا نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ  گائے انڈیا کی ثقافت کی علامت ہے اور پہلے سے موجود تحفظِ حیوانات کے قانون میں ترمیم کے بعد نیا بل منظور کیا گیا ہے۔گائے کو ذبح کرنے والوں کو عمر قید کی سزا دی جائے گی اور گائے کا گوشت بیچنے اور دوسری ریاستوں میں سمگل کرنے والوں  کو10سال قید کے علاوہ 1لاکھ سے5لاکھ روپے جرمانہ کیا جائے گا۔

’’کراچی میں ابراہیم حیدری قبرستان میں اس قبر پر کالی بلی پھیرا دیتی ہے،کوئی قریب جانے کی کوشش کرے تو غرانے لگ جاتی ہے کیونکہ وہ قبر دارصل ۔۔۔۔۔‘‘

واضح رہے کہ گجرات کے وزیر اعلیٰ وجے روپانی بھی بار بارگائے ذبح کرنے والے افراد کے لئے 'سخت' سزاؤ ں کا وعدہ کرتے رہے ہیں۔نیا قانون فوری طور پر نافذ العمل ہوگا۔

مزید : بین الاقوامی