ملک بھر میں کورونا وائرس سے جاں بحق ہونے والوں کی تعداد میں اضافہ ،متاثرہ افراد کی تعداد 1914ہو گئی

ملک بھر میں کورونا وائرس سے جاں بحق ہونے والوں کی تعداد میں اضافہ ،متاثرہ ...
ملک بھر میں کورونا وائرس سے جاں بحق ہونے والوں کی تعداد میں اضافہ ،متاثرہ افراد کی تعداد 1914ہو گئی

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن )ملک بھر میں گزشتہ 24گھنٹے کے دوران کورونا وائرس سے مزید دو افراد کے جاں بحق ہونے کے بعد مہلک وائرس سے پاکستان میں ہلاک ہونے والوں کی تعداد 26 ہوگئی جبکہ گزشتہ چوبیس گھنٹے میں49متاثرہ افراد سامنے آنے کے بعد متاثرہ افراد کی تعداد 1914 تک جاپہنچی ہے۔58افراد صحت یاب ہو گئے ہیں جبکہ 12کی حالت تشویشناک ہے ۔

صوبہ سندھ کی وزیر صحت ڈاکٹر عذرا پیچوہو نے کراچی میں مہلک وائرس سے مزید 2 افراد کی ہلاکت کی تصدیق کی۔ ان کا کہنا تھا کہ کراچی میں 74 اور 70 سالہ شہری کورونا وائرس کے باعث انتقال کرگئے ہیں، 74 سالہ شہری دمے اور شوگر کا مریض تھا جس کا 26 مارچ کو ٹیسٹ کیا گیا تھا جو مثبت آیا تھا اور آج دوران علاج وہ چل بسا۔ شہر میں دوسری ہلاکت کی تصدیق کرتے ہوئے انہوں نے بتایا کہ جاں بحق ہونے والا کراچی کا 70 سالہ رہائشی بھی مختلف بیماریوں میں مبتلا تھا جس میں انتقال کے بعد ٹیسٹ رپورٹ میں کورونا وائرس کی تصدیق ہوئی۔

محکمہ صحت پنجاب کی جانب سے صوبے میں کورونا وائرس کے 658 کیسز کی تصدیق کی گئی ہے۔محکمہ صحت نے بتایا کہ لاہور میں 130، گجرات 62، جہلم 28، راولپنڈی 44، ننکانہ 13، گوجرانوالہ 11، فیصل آباد 9، حافظ آباد اور ڈی جی خان 5، منڈی بہاوالدین 4، رحیم یار خان اور میانوالی 3 جب کہ ملتان، وہاڑی اور سرگودھا میں 2،2 کیس ہیں۔اس کے علاوہ نارووال، اٹک، خوشاب، بہاولپور، بہاول نگر ،قصور اور لیہ میں ایک ایک کیسز ہیں۔گزشتہ روز پنجاب میں کورونا وائرس سے مزید 3 افراد جاں بحق ہوئے جس کےبعد صوبے میں مجموعی طور پر ہلاکتوں کی تعداد 9 ہوگئی۔

محکمہ صحت سندھ کے مطابق کراچی میں نئے کیسز کے بعد مجموعی کیسز کی تعداد 294 اور حیدرآباد میں 57 ہوگئی ہے جب کہ دادو میں ایک، جیکب آباد میں ایک اور جامشورو میں 2 کیسز ہیں۔اس کے علاوہ سکھر میں موجود زائرین میں 265 اور لاڑکانہ میں 7 زائرین کورونا وائرس میں مبتلا ہیں۔

خیبر پختونخوا میں کورونا وائرس سے متاثر افراد کی تعداد 221جبکہ بلوچستان میں 154ہو گئی ہے ۔آج گلگت بلتستان میں بھی کورونا وائرس کے مزید نئے کیسز سامنے آنے کے بعد مریضوں کی مجموعی تعداد 148ہوگئی ہے۔کورونا وائرس کے اب تک 7 کیسز رپورٹ ہوئے ہیں جس کے بعد وفاقی دارالحکومت میں مجموعی تعداد 58 ہوگئی ہے۔آزاد کشمیر میں اتوار کے بعد سے تاحال کورونا وائرس کا اب تک کوئی کیس سامنے نہیں آیا البتہ اتوار کو 4 افراد میں کورونا وائرس کی تصدیق ہوئی تھی۔

وزیر اعظم نے ایک بار پھر ملک میں لاک ڈاو¿ن سے انکار کرتے ہوئے کورونا وائرس سے نمٹنے کے لیے ' پرائم منسٹر کورونا ریلیف فنڈ' کا اعلان کردیا۔ادھرسندھ حکومت نے لاک ڈاو¿ن میں مزید 3 گھنٹے کی سختی کا فیصلہ کیا جس کے بعد شام 5 بجے سے صبح آٹھ 8 تک لاک ڈاون میں سختی کی جارہی ہے۔ شام 5 بجے تمام دکانیں بند کرنے کے احکامات ہیں۔ملک کے جید علمائے کرام نے فتویٰ دیا ہے کہ وبا سےاحتیاطی تدابیر کو اپنانا نبی کی سنّت ہے اور توبہ استغفار کے بغیر کورونا وائرس سے چھٹکارا ممکن نہیں۔

مزید :

اہم خبریں -قومی -کورونا وائرس -