ہزاروں فٹ بلندی پر بیٹھے ہوئے شیشے کا فرش ٹوٹ گیا

ہزاروں فٹ بلندی پر بیٹھے ہوئے شیشے کا فرش ٹوٹ گیا
ہزاروں فٹ بلندی پر بیٹھے ہوئے شیشے کا فرش ٹوٹ گیا
کیپشن: mirror

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

شکاگو (نیوز ڈیسک) دنیا کی بلند ترین عمارتوں میں سے ایک شکاگو ٹاور کی ایک خصوصی بات وہ پلیٹ فارم ہے جو زمین سے تقریباً ڈیڑھ ہزار فٹ کی بلندی پر بنایا گیا ہے اور اس کا فرش شیشے کا ہے جس سے یہ محسوس ہوتا ہے کہ آپ خلا میں چل رہے ہیں اور زمین ہزاروں فٹ نیچے ہے۔ اب ایسی صورت میں انسان پر خوف طاری ہونا تو فطری بات ہے اگرچہ یہ شیشے کا فرش بہت مضبوط ہے لیکن ایک امریکی خاندان کیلئے یہ خوف اس وقت حقیقت میں بدل گیا جب وہ زمین سے ہزاروں فٹ اوپر اس شیشے پر بیٹھے تھے اور اچانک شیشے کے ٹوٹنے کی آواز نے اُن کے دل دہلا دئیے۔ آلے ہانڈرو نامی ایک نوجوان نے بتایا کہ وہ اپنے کزنز کے ساتھ آسمان کی بلندیوں پر واقع اس پلیٹ فارم سے زمین کے دلفریب نظاروں سے لطف اندوز ہورہا تھا کہ اس کے دل میں خیال آیا کہ کیوں نہ ان حیرت انگیز لمحوں کو کیمرے کی آنکھ میں محفوظ کرلیا جائے۔ اس نے بتایا کہ وہ اپنے ہاتھ شیشے کے فرش پر رکھے تصویر بنوانے کیلئے تیار تھا کہ اچانک شیشے کے ٹوٹنے کی آواز سے وہ کانپ اٹھا، آلے ہانڈرو کا کہنا ہے کہ انہوں نے آنِ واحد میں پلیٹ فارم سے بلڈنگ کے اندر چھلانگیں لگائیں اور سٹاف کو بلوایا جنہوں نے دیگر افسران اور کاریگروں کو بلواکر مرمت کا کام شروع کروادیا۔ تاہم سکائی ڈیک نامی اس پلیٹ فارم کے منیجر نے بتایا کہ یہ شیشے کے اوپر لگی ایک حفاظتی کے ٹوٹنے کا واقعہ تھا اور اصل فرش مکمل طور پر محفوظ ہے۔