انٹرنیٹ صارفین کا کچھ بھی امریکہ سے پوشیدہ نہیں، نیا انکشاف

انٹرنیٹ صارفین کا کچھ بھی امریکہ سے پوشیدہ نہیں، نیا انکشاف
انٹرنیٹ صارفین کا کچھ بھی امریکہ سے پوشیدہ نہیں، نیا انکشاف
کیپشن: Amriki

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

 ماسکو (نیوز ڈیسک) دنیا بھر میں پھیلے امریکی جاسوسی کے جال کا بول کھولنے والے امریکی شہری ایڈورڈ سناﺅڈن نے اب مزید سنسنی خیز انکشافات کرتے ہوئے بتایا ہے کہ امریکہ کی نیشنل سیکیورٹیا یجنسی کے اہلکار لوگوں کی ذاتی زندگیوں میں جھانکتے ہیں، وہ دیکھ سکتے ہیں کہ آپ انٹرنیٹ پر کیا کررہے ہیں، کس سے رابطہ کررہے ہیں اور یہاں تک کہ آپ کیا سوچ رہے ہیں۔ نیشنل سیکیورٹی ایجنسی کے لئے کام کرنے والے سناﺅڈن نے متعدد ایسی دستاویزات کو میڈیا کے حوالے کردیا تھا کہ جن میں امریکہ کی دنیا بھر کے ممالک اور اہم شخصیات کی جاسوسی کے حوالہ سے معلومات تھیں۔ اس عمل کے بعد امریکہ نے سناﺅڈن کو غدار قرار دیتے ہوئے اس کے خلاف قانونی کارروائی کا آغاز کردیا اور سناﺅڈن اپنے جان بچانے کیلئے آج کل روس کے دارالحکومت ماسکو میں پناہ گزین ہے۔ سناﺅڈن نے امریکی ٹی وی این بی سی کے ساتھ ایک انٹرویو میں بتایا کہ وہ ایک محب وطن امریکی شہری ہے اور اس نے جو کیا وہ امریکی حکومت کے قانون شکنی میں حد سے گزرجانے پر مجبور ہوکر کیا۔ اس نے وضاحت کی کہ امریکی حکومت نے امریکی آئین کو پامال کردیا تھا اور لوگوں کو اس کے بارے میں مطلع کرنا ضروری ہوگیا تھا۔