پولیس کی جانب سے بابو صابو انٹر چینج پر طا لبات کے ساتھ بدتمیزی اور ڈرائیور پر تشدد کی مذمت

پولیس کی جانب سے بابو صابو انٹر چینج پر طا لبات کے ساتھ بدتمیزی اور ڈرائیور ...

لاہور(لیڈی رپورٹر)تحریک انصاف کی رکن پنجاب اسمبلی نبیلہ حاکم علی نے پولیس کی جانب سے بابو صابو انٹر چینج پر نجی یونیورسٹی کی طا لبات کے ساتھ بدتمیزی اور ڈرائیور پر تشدد کے خلاف اسمبلی میں تحریک التواء کا ر جمع کرادی۔پولیس نے تلاشی کی آڑمیں نجی یونیورسٹی کی بس کو روکا جس کے بعد پولیس اہلکاروں نے سواک جھیل سے واپس آنے والی بس میں سوار طالبات کے ساتھ بدتمیزی اور گالم گلوچ بھی کی۔ڈرائیور نے بتایا کہ یہ یونیورسٹی کی بس ہے اور ہم سواک جھیل سے آرہے ہیں جس پر پولیس اہلکاروں نے ڈرائیور کو بھی تشدد کا نشانہ بنایا ۔میری استدعا ہے کہ اس شرم ناک واقع میں ملوث پولیس اہلکاروں کے خلاف کاروائی کی جائے ۔

مزید : میٹروپولیٹن 1