سحر و افطار کے اوقات میں جاری لوڈشیڈنگ حکومتی دعوؤں کی نفی ہے :سراج الحق

سحر و افطار کے اوقات میں جاری لوڈشیڈنگ حکومتی دعوؤں کی نفی ہے :سراج الحق

اسلام آباد (صباح نیوز) امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹر سراج الحق نے کہا ہے کہ حکومت سحر و افطار کے اوقات میں لوڈ شیڈنگ نہ کرنے کے دعوے کی نفی کر رہی ہے پارلیمنٹ میں جو وعدہ کیا جائے اسکی پاسداری ضروری ہے اب بھی متعددعلاقوں میں کئی کئی گھنٹوں کی لوڈ شیڈنگ ہو رہی ہے اس امر کااظہار انہوں نے منگل کو سینیٹ میں نکتہ اعتراض پر کیا سینیٹر سراج الحق نے کہا کہ دیر سمیت خیبر پختونخوا کے متعدد علاقوں میں بے تحاشہ لوڈ شیڈنگ کا سلسلہ جاری ہے بجلی کی تقسیم کا نظام انتہائی ناقص ہے جسکی وجہ سے بجلی کا ضیاع بھی ہو رہا ہے کئی کئی گھنٹوں کی لوڈ شیڈنگ کے باعث ماہ مقدس میں پانی کی دستیابی کا بھی بحران پیدا ہو رہا ہے اور کئی کئی گھنٹے لوگ پانی سے محروم رہتے ہیں حکومت نے پارلیمینٹ میں وعدہ کیا تھا کہ لوڈ شیڈنگ کو کم کیا جائے گا مگر ماہ مقدس میں لوڈ شیڈنگ بڑھ گئی ہے اور انکے اپنے حلقے میں بلاجواز لوڈ شیڈنگ کا سلسلہ جاری ہے اور عوام کا کوئی پرسان حال نہیں ہے حکومت نے سحر و افطار کے اوقات میں لوڈ شیڈنگ نہ کرنے کے وعدے کی بھی پاسداری نہیں کر رہی ہے۔

سراج الحق

مزید : کراچی صفحہ اول