نیوز چینل کی گاڑی سڑک کنارے نصب بم سے ٹکراگئی،ہلاکتیں

نیوز چینل کی گاڑی سڑک کنارے نصب بم سے ٹکراگئی،ہلاکتیں
نیوز چینل کی گاڑی سڑک کنارے نصب بم سے ٹکراگئی،ہلاکتیں

  

کابل(ڈیلی پاکستان آن لائن)افغانستان میں ایک نجی ٹی وی چینل کی گاڑی سڑک کنارے نصب بم سے ٹکرا گئی جس کی وجہ سے اس پر سوار ایک افغان صحافی اور منی بس کا ڈرائیور جاں بحق ہوگیا جبکہ گاڑی میں سوار چار دیگر افراد زخمی ہوگئے۔

الجزیرہ کی رپورٹ کے مطابق چینل کے نیوز ڈائریکٹر نے بتایا ہے کہ یہ واقعہ افغان دارالحکومت کابل میں پیش آیا۔

افغان وزار داخلہ کی ترجمان مروا امینی کے مطابق واقعہ میں چار افراد زخمی ہوئے ہیں اور یہ تمام لوگ نجی ٹی وی چینل 'خورشید ٹی وی نیوز' کے ہی ملازم ہیں۔

اے ایف پی نےچینل کے نیوز ڈائریکٹر جاوید فرحادکے حوالے سے بتایا کہ منی بس میں پندرہ ملازمین سوار تھے ۔

وزارت داخلہ کے مطابق منی بس کو باقاعدہ طور پر ٹارگٹ کیا گیا ہے۔

واقعے کی ذمہ داری داعش نے قبول کرلی ہے۔

خیال رہے حالیہ دنوں میں افغان حکومت اور طالبان سے لڑںے والی داعش نے افغانستان کے شہری علاقوں میں متعدد خونیں حملوں کی ذمہ داری قبول کی ہے تاہم اس نے اس حملے کی بھی کوئی وجہ نہیں بتائی۔

یہ بارہ ماہ کے دوران  ٹی وی چینل یا صحافیوں پر کیاگیادوسرا حملہ ہے۔ اگست 2019میں بھی اسی خورشید نیوز ٹی وی کی ایک گاڑی پر دستی بم حملہ کرکے دوافراد کو قتل کردیا گیاتھا۔

گزشتہ حملے کی ذمہ داری کسی نے قبول نہیں کی تھی۔

واضح رہے افغانستان دنیا میں صحافیوں کیلئے بدترین ممالک میں سے ایک ہے جہاں صحافیوں کو ملک میں جاری طویل جنگ کی کوریج کیلیے جان داو پر لگانی پڑتی ہے۔

مزید :

بین الاقوامی -