کنوکے برآمدکنندگان انڈونیشیا کی زیروفیصدڈیوٹی سے فائدہ اٹھائیں

کنوکے برآمدکنندگان انڈونیشیا کی زیروفیصدڈیوٹی سے فائدہ اٹھائیں

  

لاہور(کامرس رپورٹر)ڈائریکٹر جنرل ٹریڈ ڈویلپمنٹ اتھارٹی( لاہور) اظہر اقبال نے کِنّو کی برآمد کے موضوع پر گزشتہ روز بھلوال میں منعقدہ سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ کِنّو کے برآمد کنندگان کِنّو کی انڈونیشیا برآمد پر زیرو فیصد ایکسپورٹ ڈیوٹی سے فائدہ اٹھائیں اور ملکی تجارت کو بڑھانے میں اپنا کردار ادا کریں۔انہوں نے کہا کہ پاکستان کِنّوکی انڈونیشیاءبرآمد سے کثیر زرمبادلہ کماسکتا ہے اور کِنو کی بہترین پیداواری صلاحیت رکھتا ہے ۔ انہوں نے انڈونیشیا اور پاکستان کے مابین ترجیحی بنیادوں پر تجارتی معاہدے کے تناظر میں ملکی برآمد کنندگان کو میسر سہولیات کا ذکر کیا ۔ انہوں نے کِنّو کے کاشتکاروں اور برآمد کنندگان کو کِنّو کی ایکسپورٹ کوالٹی ، فائٹو سینٹری اقدامات اور نان ٹیرف بیریئرز پر بریف کیا۔ سیمنیار سے چیئرمین پاکستان سٹرس گروورز، پیکرز اینڈ سیکسپورٹرز کواپریٹو سوسائیٹی حاجی محمد اعظم نے خطاب کرتے ہوئے کِنو کی انڈونیشیائی مارکیٹ برآمد کے موضوع پر اظہار خیال کیا۔ڈائریکٹر ٹی ڈی اے پی، فیصل آباد اﷲ داد تارڑ نے سیمنیار کے شرکاءکا سیمینار میں بھرپور شرکت کرنے پرشکریہ ادا کیا۔ انہوں نے کہا کہ اس سیمینار کے انعقاد کا بنیادی مقصد کِنو کے کاشتکاروں اور برآمد کنندگان کو کِنو کی انڈونیشائی مارکیٹ کے نتاظر میں پاکستان اور انڈونیشیاءکے مابین ترجیحی بنیادوں پر تجارتی معاہدے سے حاصل شدہ سہولیات سے باور کراناتھا ۔

مزید :

کامرس -